مقبول خبریں
پاکستان میں صاف پانی کی سہولت کو ممکن بنانے کیلئے مختلف منصوبوں پر کام کرونگی:زارہ دین
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان اور بھارت کے درمیان سب سے بڑا مسئلہ کشمیر کا حل ہے: چوہدری فواد حسین
لندن:پاکستان اور بھارت کے درمیان سب سے بڑا مسئلہ کشمیر کا حل ہے جس کے بغیر دونوں ملکوں میں تعلقات معمول پر نہیں آ سکتے،پاکستان کی موجودہ حکومت کشمیریوں کی پشت پر کھڑی ہے،عالمی سطح پر مسئلہ کشمیر کو انسانی حقوق کے حوالے سے روشناس کرایا جائے اور مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں بند کروانے کیلئے بیرونی ممالک میں مقیم کشمیری جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین اور انکی ٹیم کی کاوشیں ممبران پارلیمنٹ کے ساتھ رابطوں کے حوالے سے قابل ستائش ہیں دوسری تنظیموں کو بھی انکے مثبت کام کی تقلید کرنی چاہئے،اگلے دورہ برطانیہ میں نارتھ آف انگلینڈ اور مڈ لینڈ کا بھی دورہ کروں گا اور مسئلہ کشمیر پر لابی اور جہلم و میرپور کے لوگوں سے خصوصی ملاقاتیں کروں گا،وزیر اعظم عمران خان کی حکومت بیرون ملک کشمیریوں اورپاکستانیوں کو سب سے بڑا قیمتی سرمایہ سمجھتےہیں اور ہر سطح پر ان کی صلاحیتوں سے استفادہ حاصل کیا جائے گا،ہماری حکومت کے وزرا اور ممبران اسمبلی کے دروازے ہر شخص کیلئے کھلے ہوئے ہیں بیرون ملک پاکستانیوں کوکسی قسم کی مشکلات کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا،ان خیالات کا اظہار پاکستان کے وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات چوہدری فواد حسین نے جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹرنیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین سے دورہ لندن کے دوران ایک خصوصی ملاقات میں کیا اس موقع پر بیڈ فورڈ سے لیبر ممبر پارلیمنٹ محمد یاسین اور والسل سے کنزرویٹو ممبر پارلیمنٹ ریڈی ہیوز ایم پی بھی موجود تھے،راجہ نجابت حسین نے چوہدری فواد حسین کے دورہ برطانیہ کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ ان کی لندن کی ملاقاتوں سے پاکستان کی موجودہ حکومت کی مستقبل کی پالیسیوں اور مسئلہ کشمیر کو سفارتی محاذ پر اجاگر کرنے کی حکمت عملی سے بیرون ملک پاکستانیوں اور کشمیریوں کی حوصلہ افزائی ہوئی ہے اور ہم توقع کرتے ہیں کہ وہ وزیر اعظم عمران خان تک تحریک آزادی کشمیر کو سفارتی محاذ پر اجاگر کرنے رہنمائوں کے جذبات سے آگاہ کریں گے اور بین الاقوامی محاذ پر مسئلہ کشمیر کو سفارتی محاذ پر منظم انداز میں کوششیں تیز کی جائیں گی اور ریاست جموں و کشمیر کی تمام اکائیوں کے نمائندوں کی مشاورت سے جہاں وزارت خارجہ کو مزید متحرک کرے گا اور آزاد کشمیر کی حکومت کو بیرونی سفارتکاری میں بھی شامل کریں گے،راجہ نجابت حسین نے وزیر اطلاعات کو برطانیہ کے شمالی علاقوں اور مڈ لینڈز میں ممبران پارلیمنٹ اور متحرک کشمیری و پاکستانی کمیونٹی سے ملاقاتوں کی بھی دعوت دی جبکہ تحریک کے مستقبل کے پروگراموں اور حالیہ کامیابیوں سے بھی آگاہ کیا۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر