مقبول خبریں
دار المنور گمگول شریف سنٹر راچڈیل میں جشن عید میلاد النبیؐ کے حوالہ سےمحفل کا انعقاد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
24 اکتوبر کو 8 لاکھ سے زائد کشمیری نژاد برطانوی یوم تاسیس آزاد کشمیر بھرپور طریقے سے منائینگے
مانچسٹر:کم و بیش ایک ملین سے زائد کشمیری نژاد برٹش 24 اکتوبر کو برطانیہ بھر میں یوم تاسیس منائیں گے اس موقع پر برطانیہ بھر کی ڈسٹرکٹ کونسل آفس پر کشمیری پرچم کشائی کی جائے گی۔ چوبیس اکتوبر کو برطانیہ بھر میں کشمیری پرچم لہرانے گا۔ کشمیری ایسوسی ایشن راچڈیل کے اعلیٰ عہدے داران نے یوم تاسیس منانے اور پرچم کشائی کے وقت و طریقہ کار کو آج کشمیری ایسوسی ایشن راچڈیل کے مرکزی آفس میں حتمی شکل دینے پر ھنگامی اجلاس بلایا گیا۔جس میں کشمیری نژاد برٹش کونسلرز، ڈپٹی لیڈر آف کونسل راچڈیل کونسلر عدالت علی،کیبنٹ سینئر رکن آف کونسل و ممبر پارلیمنٹ راچڈیل آفس کے سینئر آفیسر کونسلر پروفیسر افتخار احمد، سنئیر کیبنٹ ممبر آف کونسل راچڈیل کونسلر شکیل احمد،کیبنٹ ممبر اف کونسل راچڈیل کونسلر آفتاب احمد،ماہر قانون دان فاروق قریشی اور خالد چوہدری نے بھی شرکت کی۔برطانیہ بھر میں کشمیری نژاد برٹش لوکل کونسلوں میں مئیر آف کونسل،لیڈر آف کونسل، کونسلرز،ممبر پارلیمنٹ، منسٹرز و ممبر آف لارڈز ھاؤس و یورپین پارلیمنٹ میں نمائندگی کر رہے ہیں۔اس کے علاؤہ فوج،پولیس،و دیگر سرکاری و غیر سرکاری اداروں میں اعلیٰ عہدے پر فائز ہیں۔جو کشمیری و پاکستانی کمیونیٹیز کے لیے کسی اعزاز و فخر سے کم نہیں۔ایک ملین کے قریب کشمیری نژاد برٹش سالانہ کروڑوں پاؤنڈز زرمبادلہ پاکستان بھیجتے ہیں۔ سیاسی لیڈران و کشمیری ایسوسی ایشن راچڈیل کے اعلیٰ عہدے داران نے کشمیر پر ہونے والے ظلم پر بات کرتے ہوئے کہا کہ کشمیریوں پر بھارتی ظلم کی انتہا ھو چکی۔اب اور ظلم ناقابلِ برداشت ھے۔ھم برطانیہ سمیت حکومت پاکستان و اقوام متحدہ سے اپیل کرتے ہیں کہ اس ظلم کا خاتمہ فی الفور کروایا جائے۔کب تک؟ ننھے معصوم بچوں کے لاشے،مائیں جوان بچوں، بچے اپنے والدین،کے لاشے اٹھاتے رہیں گے اور جوان بچیوں کی عزت کو پامال ھوتے دیکھتے رہیں گے۔ آخر کب تک؟کشمیری اس دلدل اور ظلم کی چکی میں پستے رہیں گئے۔سپر پاور امریکہ،برطانیہ،یورپین ممالک،پاکستان و چین کیوں اس دیرینہ مسلئے کو حل کروانے اور مسلسل ظلم و بر بریت کو بند کروانے میں ناکام ہیں؟ مقبوضہ کشمیر کی داستان کسی کربلا سے کم نہیں ہے۔کشمیریوں کے صبر کی انتہا ھو چکی۔کشمیریوں کی نیندیں حرام و دن رات بے چینی و افسردگی و غلامی میں گزرتا ھے لیکن دنیا کے حکمران اپنے محلات میں شان وشوکت کی زندگی ایسے گزار رہے ہیں جیسے انکو ایک دن نہ تو اس دنیا سے کوچ کرنا ھے اور انکو سدا اسی طاقت کے نشے میں برا جمان رہنا ھے۔کشمیری ایسوسی ایشن راچڈیل حکومت پاکستان و برطانیہ،امریکہ و چین و یورپین یونین سے کشمیریوں پر مسلسل ظلم و بر بریت کیخلاف اپنی آواز کو بلند کرنے اور اس دیرینہ مسلئے کو حل کروانے کا مطالبہ کرتی ھے۔24 اکتوبر کشمیر نیشنل ڈے پر کشمیری ایسوسی ایشن راچڈیل اپنے آئندہ کے لائحہ عمل تیار کرنے کی تاریخ کا اعلان کرے گی۔جس میں کشمیریوں پر ظلم و بر بریت کیخلاف،کشمیریوں کو آزادی،کشمیری آئی ڈینٹی سمیت و دیگر پہلوؤں کا جائزہ لیا جائے گا۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر