مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
برٹش حجاج کیساتھ ٹورآپریٹرز کا ناروا سلوک انتہائی افسوسناک، ذمہ داران کا محاسبہ ہونا چاہئے:اے بی ایچ
لندن ...فریضہ حج کی ادائیگی کے سلسلے میں صرف پاکستان کے عازمین حج ہی مشکلات کا شکار نہیں ہیں بلکہ دنیا بھر میں انہیں دھوکہ دہی جیسی ایک مشترک مشکل کا سامنا ضرور ہے۔ برطانیہ میں حجاج کرام کے مسائل کو اجاگر کرنے اور ان کے حل کیلئے عملی اقدامات کرنے والی تنظیم ایسوسی ایشن آف برٹش حجاج (اے بی ایچ)نے لندن میں ایک پروگرام منعقد کیا جس میں ان عازمین کو مدعو کیا گیا جنہیں حج ٹور آپریٹرز کے جھوٹے وعدوں سمیت سفر اور سعودی عرب میں رہایش و ٹرانسپورٹ کے حوالے سے مشکلات پیش آئیں۔ اور ساتھ ہی متعلقہ برطانوی اداروں کے نمائندوں کو بھی بلایا گیا اور انہیں موقع فراہم کیا گیا کہ وہ متاثرین سے خود مل سکیں۔ اس موقع پر متاثرین نے بتایا کہ ہر سال برطانیہ سے فریضہ حج و عمرہ کی ادائیگی کے لئے جانے والے عازمین کی ایک بڑی تعداد بعض ٹور اینڈ ٹریول آپریٹرز کے ہاتھوں فراڈ اور استحصال کی وجہ سے سخت مشکلات اور پریشانیوں سے دوچار ہوتی ہے اور اس سال ایک بار پھر 500 کے قریب معصوم عازمین اس ظلم اور زیادتی کانشانہ بنے۔ وہان آئے متاثرین نے متعلقہ محکمہ کے آفیسران اور ممبران پارلیمنٹ سے التجا کی گئی کہ حج جیسے مقدس فریضہ کی ادائیگی میں ملوث افراد سے کوئی رعایت نہ برتی جائے۔ لارڈ نذیر احمد نے کہا برطانیہ میں سبھی ٹور آپریٹر ایسی بے قاعدگیوں کے مرتکب نہیں تاہم وہ چند گندی مچھلیاں جو پورے تالاب کو گندہ کر رہی ہیں انہیں پیکج ٹریول ریگولیشنز ١٩٩٢ کی صریح خلاف ورزی پر ضرور قابل گرفت ہونا چاہئے۔ ہائوس آف لارڈز میں لیبر پارٹی کے ڈپٹی لیڈر لارڈ فل ہنٹ نے اس مسئلے کو قومی سظح تک اجاگر کرنے اور عازمیں حج کی آواز بننے پر ایسوسی ایشن آف برٹش حجاج کی کاوشوں کو سراہا اور کہا کہ وہ ایسی بے قاعدگیوں کے خاتمے کیلئے اپنا ہر ممکن تعاون ایسوسی ایشن کو دینے پر تیار ہیں۔ تقریب میں موجود دیگر ممبران پارلیمنٹ جن میں بیرونس الدین، لارڈ ٹوبی ہیرس، جان ہیمنگ، اسٹیو مکابی اور مائک گیپس نے اس امر پر زور دیا کہ عازمین حج خود بھی تحقیق کے بعد اس فریضہ کی ادائگی کیلئے ٹور آپریٹر کا انتخاب کریں اور حفظان صحت کے اصولوں کی مکمل پاسداری کریں، اس مسئلے کے حل کیلئے انہوں نے بھی اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا۔ برمنگھم سے آئیں برطانوی ادارہ ٹریڈنگ اسٹینڈرڈ کی چیف سجیلا نصیر نے برمنگھم میں بے قاعدگیوں پر پکڑے جانے والے حج ٹور آپریٹرز کے بارے میں ہونے والی کاروائی سے آگاہی دی۔ انہوں نے بتایا کہ چند ٹور آپریٹرز کا مواخزہ ہو چکا جبکہ کچھ عدالتی کاروایوں کے منتظر ہیں۔ لندن پولیس کے کمانڈر اسٹیو نے اظہار خیال کرتے ہوئے اس امر پر عازمین حج سے مکمل تعاون کا اعادہ کیا انہوں کہا برطانوی قانون سب ٹور آپریٹرز کیلئے ہے کوئی بھی شخص کسی توجیح کی آڑ لیکر گرفت سے نہیں بچ سکتا۔ ایسوسی ایشن کے ترجمان ڈاکٹر سید رضا نے بھی خیالات کا اظہار کیا۔ نظامت کے فرائض ایسوسی ایشن کے جنرل سیکریٹری خالد پرویز نے ادا کئے۔ انہوں نے تمام سیاسی مذہبی اور سماجی تنظیموں اور شخصیات سے کہا کہ برطانیہ کے مہذب اور جمہوری معاشرہ میں اللہ کے مہمانوں کے ساتھ یہ سلوک انتہائی افسوسناک ہے اور اس کے ذمہ داروں کو کیفر کردار تک پہنچانے میں اپنا کردار ادا کریں۔ آخر میں یونیورسٹی آف لیڈز میں مذاہب پر ریسرچ کےسکالر ڈاکٹر سین مکلفین نے برطانوی حجاج کے حوالے سے اپنا مقالہ لارڈ نزیر احمد کو پیش کیا۔