مقبول خبریں
پاکستانی کمیونٹی سنٹر اولڈہم میں بیڈمنٹن ٹورنامنٹ کا انعقاد، برطانیہ بھر سے 20 ٹیموں کی شرکت
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بحثیت چیئرمین بورڈ آف ڈائریکٹرزاوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن تاریخی اقدامات اٹھائے: بیرسٹر امجد
راچڈیل:پاکستان سے باہر بیرون ممالک بسنے والے پاکستانیوں کے مسائل کو اجاگر اور حل کروانے کے لیے اوورسیز پاکستانیز فاؤنڈیشن کے نام سے سرکاری تنظیم کام کر رہی ہے ۔سابق حکومت کے دور میں پہلی مرتبہ بیرون ملک بسنے والے کسی شخص کو اوورسیز پاکستانیز فاؤنڈیشن کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کا چئیرمن برطانیہ کے نامور قانون دان بیرسٹر امجد ملک کو تعینات کیا گیا۔نگران حکومت نے آتے ہی انہیں ذمہ داریوں سے سبکدوش کر دیا ہے۔ میڈیا سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے بیرسٹر امجد ملک کا کہنا تھا کہ بحثیت چیئرمین بورڈ آف ڈائریکٹرزاوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن تاریخی اقدامات اٹھائے اور بیرون ملک سے پاکستان سفر کرنے اور واپس آنے والوں کے لیے شکایات سیل قائم کیے۔ان کا مذید کہنا تھا کہ پاکستان سے باہر شہید ہوئے والے پاکستانیوں کے لواحقین کو ایک ارب روپے تقسیم کیے اور اب جب ذمہ داریوں سے سبکدوش ہوا ہوں تو اوررسیز پاکستانی فاؤنڈیشن میں ایک اچھا ماحول، بورڈ اور اچھی روایت دے کر جا رہے ہیں۔میں نے اوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن میں ایمانداری، لگن اور شفافیت سے کام کیا ہے اور پہلی دفعہ اوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کا انتخاب بیرون ملک سے کیا گیا جو میرے لیے اعزاز کی بات ہے سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف نے جو ذمہ داری سونپی تھی احسن طریقے سے سر انجام دی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ہم نے چھبیس ماہ کے دوران جو کام کیا آنے والوں کے لیے چیلنج ہے اور آنے والی نئ منتخب حکومت کو امریکہ میں بسنے والی پاکستانی کمیونٹی کو بھی نمائندگی دینی چاہیے۔ انہوں نے زور دے کر کہا کہ بورڈ آف گورنرز کا نیا چیئرمین بھی بیرون ملک سے ہونا چاہیے۔اپنی ذات بارے ان کا کہنا تھا کہ ان لوگوں نے فیصلہ کرنا ہے جنہوں نے انہیں ذمہ داری سونپی تھی کہ وہ اس پر پورا اترے ہیں اور بیرون ممالک بسنے والے پاکستانیوں نے جن کے لیے انہوں نے محنت لگن سے کام کیا اور میں عہدے سے ہٹانے جانے بارے عدالت نہیں جاؤں گا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق اور سیٹوں کے لیے برطانیہ و یورپ کی نمائندگی کو یقینی بنانا ہے اور میرے اوورسیز پاکستانی فاؤنڈیشن کی ذمہ داریاں سنبھالنے سے پہلے کم لوگوں نے فاؤنڈیشن کا دفتر دیکھا تھا۔اوررسیز پاکستانی فاؤنڈیشن میں نئے تعینات ہونے والے ممبران کو انہوں نے خوش آمدید کیا اور کہا کہ ان پر بھاری ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل کو حل کروانے میں بھرپور کردار ادا کریں۔ان کا کہنا تھا کہ میں اور بورڈ ممبران نے فاؤنڈیشن کو فعال کرنے میں نمایاں کردار ادا کیا ہےمدت تعیناتی کے دوران کوئ مالی بے ضابطگی نہیں ہوئ اور نہ ہی بدعنوانی ثابت ہوئی ہے ۔میں نے بحثیت بورڈ آف ڈائریکٹرز اوررسیز پاکستانیز فاؤنڈیشن اللہ کی خوشنودی کے لیے ایمانداری سے کام کیا اور اوررسیز پاکستانیز فاؤنڈیشن کی تاریخ میں پہلی مرتبہ سالانہ رپورٹ مرتب کر کے صدر پاکستان کو پیش کی جس پر وہ حیران تھے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر