مقبول خبریں
جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ برانچ کے زیرِ اہتمام فکر مقبول بٹ شہید ورکز یونیٹی کنونشن کا انعقاد
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
محبوبہ مفتی کی حکومت ختم، صدر رام ناتھ کووند نے گورنر راج نافذ کر دیا
سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بی جے پی کی علیحدگی کے بعد محبوبہ مفتی کی حکومت ختم، صدر رام ناتھ کووند نے گورنر راج نافذ کر دیا، رکن اسمبلی اسد الدین اویسی کا کہنا ہے مودی اور مفتی نے وادی جنت نظیر کو جہنم میں تبدیل کر دیا ہے۔مقبوضہ کشمیر میں بی جے پی اور پی ڈی پی کی مخلوط حکومت کی ہنڈیا پھوٹ گئی، ریاستی اسمبلی میں بی جے پی کی علیحدگی کے بعد پی ڈی پی کی رہنما محبوبہ مفتی نے استعفیٰ دے دیا جس پر صدر رام ناتھ کووند نے گورنر راج نافذ کر دیا۔ گورنر این این وہرہ چوتھی بار ریاست میں حکومتی امور سر انجام دیں گے، اس سے پہلے مقبوضہ کشمیر میں دو ہزار آٹھ، دو ہزار پندرہ اور سولہ میں بھی گورنر راج نافذ کیا گیا تھا۔ادھر بھارتی پارلیمنٹ کے ایوان زیریں لوک سبھا کے رکن اسد الدین اویسی بی جے پی پر برس پڑے، کہتے ہیں،،مودی سرکار کب تک اپنی ناکامیاں چھپائے گی۔ذرائع کا کہنا ہے گورنر راج چھ ماہ تک نافذ رہ سکتا ہے،جسکے بعد صدر راج نافذ ہو سکتا ہے لیکن اسکے لئے اسمبلی کی منظوری درکار ہے۔