مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
اوورسیز میں پاکستانی تہذیب وثقافت کو فروغ دینے میں اپوا نے فعال کردار ادا کیا ہے
بر منگھم:آل پاکستان ویمن ایسوسی ایشن برمنگھم برانچ کے عہدیداران کے انتخابات ہوئے جس میں ہر شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والی ممبر خواتین نے شرکت کی ۔ انتخابات کا یہ عمل اپوا برمنگھم کی سابق چیئرپرسن اور سینئر ایڈوایزر ثمینہ راجہ کی زیرِ نگرانی ہوا ۔ اس موقع پر رفعت مغل کو چیئرپرسن ، روبینہ خان سیکرٹری جنرل ، ساجدہ اعوان ٹریثری اور صائمہ ہارون کو پریس سیکرٹری منتخب کیا گیا ۔تقریب میں اپوا برمنگھم کی بانی رکن شمیم محمود چشتی نے خصوصی شرکت کی ، ان کا کہنا تھا کہ جب انہوں نے کچھ خواتین کے ساتھ مل کر برمنگھم میں اپوا کی بنیاد رکھی تو حالات بہت مختلف تھے ۔ پاکستانی کمیونٹی بہت کم تھی ، رابطے کے ذریعے نہ ہونے کے باعث انتہائی دشواری کا سامنا کرنا پڑتا تھا ۔ تاہم اب حالات بدل چکے ہیں برمنگھم میں سینکڑوں کی تعداد میں پاکستانی اور کشمیری کمیونٹی آباد ہے ۔ اس لیے اپوا کے پلیٹ فارم کے ذریعے آپس میں روابط کو مزید فروغ دیا جا سکتا ہے ۔ اپوا برمنگھم کی سینئر ایڈوایزر ثمینہ راجہ نے منتخب ہونے والی عہدیداران کو مبارک باد پیش کرتے ہوے ان کی کارکردگی کو سراہتے ہوے کہا کہ یہ تمام خواتین اپنے اپنے شعبے میں پہلے سے خود کو منوا چکی ہیں اور ان کی اپوا کے لیے کام قابل تحسین ہے ۔ اپوا برمنگھم کی چیئرپرسن رفعت مغل برٹش پاکستانی خواتین کو اپوا کے پلیٹ فارم پر خوش آمدید کرتے ہوے کہا کہ ہماری پہلی ترجیح یہی ہے کہ پاکستان کے روشن امیج کو دنیا کے سامنے پیش کیا جاے ۔ اور پاکستانی تہذیب وثقافت کو فروغ مثبت سرگرمیوں کے انعقاد سے ہی ممکن ہے ۔ بالخصوص برطانیہ میں آبادپاکستانی خواتین کے مسائل کو حل کرنے میں اپوا برمنگھم اپنابھرپور کردار ادا کرے گی ۔ سیکرٹری جنرل روبینہ خان کا کہنا تھا کہ برمنگھم شہر ایک ملٹی کلچرل شہر ہے اور مختلف قوموں اور رنگ ونسل کے لوگوں کے درمیان روابط کو فروغ دینے میں ہمیں اپنا کردار ادا کرنا ہو گا ۔اور اپوا برمنگھم نے گذشتہ ایک برس سے بھی کم کے عرصے میں ایسے کء پروگرام کیے ہیں جس سے آپس میں اتحادواتفاق کو فروغ دینے میں مدد ملتی ہے ۔ اس موقع پر تنظیم کی ٹرثیری ساجدہ اعوان کا کہنا تھا کہ بیرون ملک رہتے ہوئے پاکستان کی تہذیب وثقافت کو فروغ دینے میں اپوا نے فعال کردار ادا کیا ہے ۔ انہوں نے خواتین کو شمولیت کی دعوت دیتے ہوے کہا کہ ہماری کوشش ہو گی کہ ہر مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والی خواتین کو نمایندگی دی جاے بالخصوص گھریلو خواتین کے لیے یہ ایک بہترین موقع ہو گا کہ وہ اپنی صلاحیتوں کو منوا سکتی ہیں ۔ پریس سیکرٹری صائمہ ہارون کا کہنا تھا ہماری خواتین زندگی کے ہر شعبے میں نمایاں کردار ادا کر رہی ہیں اور اپوا کا پلیٹ فارم ایسی خواتین کو موقع فراہم کرتا ہے جو اپنی صلاحیتوں کو منوانا چاہتی ہیں ۔ ایک سال سے بھی کم کے عرصے میں ہماری ٹیم نے اپنے کام سے خود کو منوایا ہے یہی وجہ ہے کہ ہر شعبے سے خواتین اپوا برمنگھم کی ممبر بن رہی ہیں ۔ اپوا برمنگھم کی ایگزیکٹو کمیٹی کی اراکین نے اپوا کے اس پلیٹ فارم کے ذریعے برطانیہ میں آباد پاکستانی خواتین کے مساہل کو اجاگر کرنے میں اپنا کردار ادا کرنے کے عزم کا اعادہ کیا ۔ ایگزیکٹو کمیٹی میں عظمی خان ، ناہید خان ، عطیہ مغل، نسرین اعوان ، شازہنہ تیمور ، نورین یاور ، شام عباسی ، نگینہ صادق ، ثمینہ یعقوب، نگہت عدنان اور کلثوم اختر شامل ہیں ۔ اپوا پاکستان انٹرنیشنل افیرز کی چیئرپرسن زہرا لیلی بخاری نے اپوا برمنگھم کی ٹیم کو اپنے بھرپور تعاون کی یقین دہانی کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ وہ بیرون ملک رہتے ہوئے اپنے ملک کے نام کو بام عروج تک لے کے جائیں گئیں ۔ اپوا یوکے کی چیئرپرسن نسیم خان اور ٹرسٹی اور خزانچی شیری خلیلی نے نئی ٹیم کو مبارک باد پیش کرتے ہوے اس امید کا اظہار کیا کہ وہ پاکستانی خواتین کے مسائل حل کرنے اور پاکستان کا مثبت پہلو اجاگر کرنے میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں گئیں۔ بعد ازاں منتخب ہونے والی عہدیداران کے اعزاز میں اپوا برمنگھم کی بانی رکن شمیم محمود چشتی کی جانب سے افطار ڈنر کا اہتمام کیا گیا ۔