مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
دنیا میں ہر قوم اور مذہب کے لوگ سیدنا امام حسین سےعقیدت رکھتے ہیں:علامہ افضل حیدری
برمنگھم ... شیعان حیدر کرار نے ملک بھر کیطرح مڈلینڈز میں بھی مجالس عزا برپا کیں اور نواسہ رسول اور انکے جانثار ساتھیوں کی شہادت کے فلسفے پر روشنی ڈالی۔ دو بڑی مجالس مرکزی جامع مسجد حسینیہ سمال ہیتھ اور جامع مسجد خوجہ اثناء عشری کلفٹن روڈ میں ہوئیں۔ مجالس میں اہل تشیع کے علاوہ اہل سنت والجماعت و دیگر مسلک کے افراد نے بھی شرکت کی۔ بھارت سے آئے معروف شیعہ عالم دین مولانا فتح علی نے واقعہٴ شہادت امام علی مقام پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ سید امام حسین کی شہادت سے انسانیت کے ایک نئے دور کا آغاز ہوا اور سیدنا حسین نے اپنی اور اپنے خاندان کی قربانی دے کر یہ ثابت کیا کہ جھوٹ، ظلم، بدکاری اور منافقت جس قدر چاہے مضبوط ہوجائیں اور ان کے پاس جس قدر بھی طاقت، اور مال و دولت آجائے وہ حق اور سچ کو دبا نہیں سکتا۔ مرکزی جامع مسجد حسینیہ میں مجلس سے خطاب کرتے ہوئے لاہور سے آئے ہوئے معروف شیعہ عالم دین علامہ افضل حیدری نے کہا کہ سیدنا امام حسین نے کربلا میں اپنے خالق و مالک اور اپنے نانا حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم سے اپنی وفاداری اور محبت کا حق ادا کردیا۔ انہوں نے کہا کہ آج دنیا میں صرف مسلمان ہی نہیں بلکہ ہر قوم ہر مذہب اور علاقے کے لوگ سیدنا امام حسین سے محبت اور عقیدت رکھتے ہیں۔ حسینیہ مسجد و امام بارگاہ میں مجلس کے بعد عاشور کے اعمال اور ذکر اہل بیت کے بعد شبینہ تابوت سیدنا امام حسین برآمد کی گئی اور ذوالجناح نکالا گیا اور مسجد کے احاطے میں زنجیر زنی کی گئی۔ دریں اثنا معروف سکالر مرکزی جامع مسجد برمنگھم کے چیئرمین ڈاکٹر محمد نسیم نے محرم الحرام کے حوالے سے اپنے بیان میں کہا کہ موجودہ حالات میں پوری امت مسلمہ کو آپس میں مکمل اتحاد، یک جہتی اور ذمہ داری کا مظاہرہ کرنا چاہئے اور اپنے درمیان تاریخی اختلافات اور واقعات کو بنیاد بنا کر اپنی اجتماعی اور ملی قوت کو کمزور نہیں کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ مومنین کے لئے قرآن حکیم میں واضح ہدایات موجود ہیں کہ مسلمانوں کے درمیان زیادتیوں اور بے انصافیوں کا فیصلہ روز قیامت ہوگا اور اللہ کی ذات یہ فیصلے خود کرے گی۔اس لئے مسلمانوں کو اپنے درمیان ایسے اختلافات کو بڑھنے اور ان کے فیصلے خود کرنے کی بجائے خود کو اللہ اور اس کے رسول کی تعلیمات اور قرآن و سنت کے احکامات پر کار بند رکھنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ بہت سے اختلافات ایسے ہیں جنہیں جس قدر کوئی چاہے بڑھایا جا سکتا ہے۔ لیکن یہ مومن کی شان نہیں ہے۔