مقبول خبریں
مسرت چوہدری اور اختر چوہدری کا لارڈ مئیر عابد چوہان کے اعزاز میں ظہرانہ
پاکستان پریس کلب یوکے کے سالانہ انتخابات اور تقریب حلف برداری
چیئرمین پی آئی ایچ آرچوہدری عبدالعزیز کوسوک ایوارڈ فار کمیونٹی سروسز سے نواز گیا
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
ہر انسان کو اس کے مذہب کے مطابق تدفین کی اجازت ملنی چاہئے: سعیدہ وارثی و دیگر
Corona virus
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم ،اقوام متحدہ ، انسانی حقوق کی تنظیموں کیلئے لمحہء فکریہ :چوہدری بشیر رٹوی
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی سیکورٹی فورسز کی جارحیت اور انسانیت سوز کاروائیاں اپنے عروج پر ہیں جو عالم اقوام،اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی تنظیموں کے لیے لمحہء فکریہ ہے۔مسلم کانفرنس برطانیہ کے صدر چوہدری محمد بشیر رٹوی نے مقبوضہ کشمیر کی تازہ ترین صورتحال بارے میڈیا کو دیے گئے اپنے ایک خصوصی بیان میں کیا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ بھارت کو باور کروانا چاہتے ہیں کہ کہ غلیظ اور اوچھے ہتھکنڈوں سے باز آ جائے وہاں پر بچوں،نوجوانوں بہنوں۔بیٹیوں کا قتل عام ہو رہا ہے۔کچھ دن پہلے بیس نہتے کشمیریوں کو شہید کر دیا گیا اور سینکڑوں کو زخمی کیا گیا ہم سیز فائر لائن کو تہس نہس کر دیں گے اگر ایسا ہی ہوتا رہا۔بھارت کو جان لینا چاہیے کہ پاکستان بھی ایٹمی طاقت ہے ۔کشمیری قوم اپنا پیدائشی حقِ خود ارادیت مانگتی ہے جو اسے ملنا چاہیے۔اقوام متحدہ خاموش تماشائی بن کر بیٹھا ہوا ہے نہ کچھ اس بارے کیا ہے اور نہ کچھ کر سکتا ہے اس ادارے کو بند کر دینا چاہیے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ سکاٹ لینڈ کی طرح کشمیری قوم کو بھی رائے شماری کا حق ملنا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں حکومت پاکستان کو آسکا سختی سے نوٹس لینا چاہیے آئے روز مظاہروں سے کچھ نہیں ہو گا اس بارے ٹھوس اور منتظم اقدامات اُٹھانے کی ضرورت ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ بھارتی سکیورٹی فورسز پیلٹ گنوں کا استعمال کر کے جان بوجھ کر نوجوانوں اور بچوں کو بینائی سے محروم کر رہے ہیں عالم اسلام کو اس بارے کچھ کرنا چاہیے۔ان کا کہنا تھا کہ مسلم کانفرنس برطانیہ کے اندر ایک مضبوط حکمت عملی اپنائے گی ۔تمام سیاسی جماعتوں کو اختلافات بھلا کر ایک پلیٹ فارم پر جمع ہونا چاہیےانکا مزید کہنا تھا کہ 18 اپریل کو برطانیہ میں ہونے والی دولتِ مشترکہ کے سربراہی اجلاس میں نریندر مودی کی آمد پر اسکا مکروہ چہرہ دکھانے کے لیے ہم سب کو بھرپور مظاہرہ کرنا چاہیےان کا کہنا تھا کہ برطانیہ کو چاہیئے تھا کہ جیسے پہلے نریندر مودی کے برطانیہ میں داخلے پر پابندی عائد کی ہوئ تھی برقرار رکھتے اور ایسے شدت اور انتہا پسند شخص کو نشان عبرت بناتے۔