مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
صحت مند معاشرے کے لئے ضروری ہے خواتین باقاعدگی سے ورزش کریں:ریحانہ
مانچسٹر:پاکستان سمیت دنیا بھر میں خواتین کا معاشی کردار وسیع تر ہوتا جا رہا ہے کسی بھی معاشرے کی ترقی کا انحصار اس بات پر ہے کہ وہاں کی خواتین روز مرہ کے معمولات زندگی میں کتنا با اثر کردار ادا کر رہی ہیں انکا صرف یہ کام نہیں کہ وہ صرف گھریلو امور سر انجام دیں اور بچوں کی دیکھ بھال کریں،صحت مند معاشرے کیلئے ضروری ہے کہ ہم اپنے کھانے پینے کی اشیا کا خاص خیال رکھیں اور باقاعدگی سے ورزش بھی کریں،ان خیالات کا اظہار خواتین کو ذہنی و جسمانی طور پر تندرست و توانا رکھنے والی سرگرم ریحانہ عرفPT.RESSAنے میڈیا کو دیئے گئے اپنے ایک خصوصی بیان میں کیا،انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے مذہب اسلام اور نبی محمدؐ نے خواتین کو جو حقوق دیئے ہیں کسی اور مذہب میں نہیں میری زندگی کا اہم مقصد یہ ہے کہ خواتین کو صحت مند زندگی گزارنے بارے آگاہی دینا اور اس سلسلے میں عملی طور پر ان کی حوصلہ افزائی کرنا ہے کیونکہ زیادہ تر ہماری ایشیائی خواتین صرف گھریلو امور سر انجام دیتی ہیں اور کام کی زیادتی کی وجہ سے جسمانی و ذہنی تنائو کا شکار ہو جاتی ہیں جس سے بیمایاں جنم لیتی ہیں،ان کا کہنا تھا کہ ہمارے معاشرے میں تبدیلی کی ضرورت ہے اور مرد حضرات کو اپنی سوچ کو وسیع کرنا ہو گا،میں نے آج تک جتنی بھی خواتین کو تربیت دی ہے وہ گھر کے اندر اور باہر ایک موثر کردار ادا کر رہی ہیں وہ باقاعدگی سے ورزش کرتی ہیں،ہمارا کورس مکمل کرنے کے بعد ان کی حوصلہ افزائی کے لئے تعریفی سرٹیفکیٹ بھی دیئے جاتے ہیں،میری کمیونٹی رہنمائوں اور مرد حضرات سے گزارش ہے کہ وہ خواتین کو معاشرے کا اہم فرد بننے کیلئے انکی مکمل حوصلہ افزائی کریں اسکے مثبت اثرات کچھ عرصہ بعد ہی انہیں آنے شروع ہو جائیں گے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر