مقبول خبریں
آشٹن گروپ کی جانب سے پوٹھواری شعر و شاعری کی محفل،شعرا نے خوب داد وصول کی
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سیاہ برقع لازم نہیں، مگر خواتین کے لیے شائستہ لباس ہے:سعودی ولی عہد
امریکہ: سیاہ برقع لازم نہیں، مگر خواتین کے لیے شائستہ لباس ہے۔ شریعت میں یہ کہا گیا ہے کہ خواتین کو بھی مردوں کی طرح باوقار لباس پہننا چاہیے لیکن اس لباس کا مطلب سیاہ برقع یا سیاہ سرپوش ہی نہیں ہے۔ سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے امریکی ٹی وی سے انٹرویو میں میزبان کے خواتین کے حقو ق اور سعودی خواتین کے روایتی لباس سے متعلق سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ خواتین کو اپنے شائستہ لباس کے انتخاب کی آزادی ہونی چاہیے اور یہ آزادی صرف سیاہ برقع تک محدود نہیں ہونی چاہیے۔ انھوں نے مزید کہا کہ قوانین بڑے واضح ہیں، شریعت میں یہ کہا گیا ہے کہ خواتین کو بھی مردوں کی طرح باوقار لباس پہننا چاہیے لیکن اس لباس کا مطلب سیاہ برقع ہی نہیں، اس کا فیصلہ خواتین پر چھوڑ دینا چاہیے کہ وہ کس قسم کے شائستہ اور باوقار لباس کا اپنے پہننے کے لیے انتخاب کرتی ہیں۔