مقبول خبریں
مئیر کونسلر جاوید اقبال کی طرف سے نسیم اشرف اور قاری محمد بلال کو تعریفی سرٹیفکیٹ سے نوازا گیا
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سیاہ برقع لازم نہیں، مگر خواتین کے لیے شائستہ لباس ہے:سعودی ولی عہد
امریکہ: سیاہ برقع لازم نہیں، مگر خواتین کے لیے شائستہ لباس ہے۔ شریعت میں یہ کہا گیا ہے کہ خواتین کو بھی مردوں کی طرح باوقار لباس پہننا چاہیے لیکن اس لباس کا مطلب سیاہ برقع یا سیاہ سرپوش ہی نہیں ہے۔ سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے امریکی ٹی وی سے انٹرویو میں میزبان کے خواتین کے حقو ق اور سعودی خواتین کے روایتی لباس سے متعلق سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ خواتین کو اپنے شائستہ لباس کے انتخاب کی آزادی ہونی چاہیے اور یہ آزادی صرف سیاہ برقع تک محدود نہیں ہونی چاہیے۔ انھوں نے مزید کہا کہ قوانین بڑے واضح ہیں، شریعت میں یہ کہا گیا ہے کہ خواتین کو بھی مردوں کی طرح باوقار لباس پہننا چاہیے لیکن اس لباس کا مطلب سیاہ برقع ہی نہیں، اس کا فیصلہ خواتین پر چھوڑ دینا چاہیے کہ وہ کس قسم کے شائستہ اور باوقار لباس کا اپنے پہننے کے لیے انتخاب کرتی ہیں۔