مقبول خبریں
آشٹن گروپ کی جانب سے پوٹھواری شعر و شاعری کی محفل،شعرا نے خوب داد وصول کی
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کہاں ہیں وہ لوگ جنہوں نے موٹروے سے جانے کا مشورہ دیا تھا؟ نواز شریف
اسلام آباد:سابق وزیر اعظم نواز شریف نے استفسار کیا ہے کہ کہاں ہیں وہ لوگ جنہوں نے موٹر وے سے جانے کا مشورہ دیا تھا۔پنجاب ہاؤس اسلام آباد میں نواز شریف اور پارٹی رہنماؤں کے درمیان بات چیت ہوئی۔ اس دوران طلال چودھری نے جی ٹی روڈ لانگ مارچ پر نواز شریف سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ وہی کمرہ ہے جس میں آپ نے جی ٹی روڈ سے لاہور جانے کا فیصلہ کیا تھا، وہ ٹرننگ پوائنٹ تھا جب آپ نے فیصلہ بدلا اور جی ٹی روڈ کا انتخاب کیا۔نواز شریف نے سوال کیا کہ کہاں ہیں وہ لوگ جو مجھے موٹروے سے جانے کا مشورہ دے رہے تھے؟ اس کمرے میں کوئی وہ مشورہ دینے والا موجودہ ہے؟ نواز شریف کے سوال کے جواب میں پارٹی رہنماؤں نے کہا کہ ایک صاحب نے تو کہا تھا کہ جہاز لیں اور پنڈی سے لاہور چلے جائیں، وہ صاحب اب یہاں موجود نہیں ہیں وہ ناراض ہیں۔طلال چودھری نے کہا کہ ہمیں نواز شریف کی واپسی چاہئے، آئندہ حکومت بن جائے گی مگر نواز شریف کی واپسی ضروری ہے، آپ نے پہلی بار حکومت اور غلامی کا فرق بتایا ہے، 5 ، 10 سال کی غلامی کی تو آفر ہو رہی تھی، گزشتہ 5 ماہ میں اپنوں سمیت بہت لوگوں نے آپ کا راستہ روکنے کی کوشش کی، ہماری جیت نواز شریف کی واپسی سے ہو گی۔