مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر بارے عالمی طاقتوں کا دوہرا معیار سوالیہ نشان ہے:پیر محمد مقصود مدنی
مانچسٹر:کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے،کشمیری عوام کے ساتھ محبت کا لازوال رشتہ ہے جسے دشمن طاقتیں گھنائونی سازشوں سے توڑ نہیں سکتے،مقبوضہ کشمیر میں بھارتی سکیورٹی اداروں کی جارحیت در اصل انسانیت کی تذلیل اور بنیادی حقوق کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے،پاکستانی عوام پانچ فروری کو کشمیریوں کے ساتھ یوم اظہار یکجہتی منا کر اس بات کو عالم اقوام اور بھارت پر ثابت کرتے ہیں کہ ہم کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی جدو جہد میں انکے شانہ بشانہ کھڑے ہیں،انسانیت اور ہمارا مذہب اسلام ہمیں اس بات کا درس دیتا ہے کہ مظلوم کی مدد و حمایت کیلئے ہمیں حق و سچ کا عَلم بلند کرنا چاہئے،یہ باتیں ادارہ نو السلام فیصل آباد پاکستان کے بانی پیر طریقت،رہبر شریعت پیر ابو احمد محمد مقصود مدنی نے یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر میڈیا کو دیئے گئے اپنے ایک خصوصی پیغام کے موقع پر کیں،انہوں نے مزید کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں عورتوں،بچوں پر جس طرح ظلم و ستم کیا جاتا ہے دیکھ کر دل خون کے آنسو روتا ہے عالمی طاقتوں اور انسانی حقوق کی علبردار تنظیموں کا دوہرا معیار سوالیہ نشان ہے،انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کشمیریوں کی اخلاقی مدد و وکالت کرتا رہے گا،حکومت پاکستان کو چاہئے کہ وہ مسئلہ کشمیر پر ٹھوس موقف اختیار کرے اس وقت ہمارے کمزور موقف کی وجہ سے بھارت آئے روز لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کرتا ہے اور بے گناہ لوگوں کو شہید کیا جاتا ہے،انہوں نے کہا کہ آئیے یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر تجدید عہد کریں کہ کشمیریوں کو انکا پیدائشی حق خود ارادیت دلوانے کیلئے تمام تر وسائل کو بروئے کار لائیں گے یہ ہمارا انسانی،دینی اور اخلاقی فریضہ ہے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر