مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
لیبیا میں کشتی ڈوب گئی، 90 تارکین وطن ہلاک، زیادہ تر پاکستانی تھے
تریپولی: لیبیا کے ساحل کے قریب یورپ جانے کی کوشش میں ایک کشتی سمندر میں ڈوب گئی۔ کشتی کے ڈوبنے کے باعث قریب 90 افراد کے ہلاک ہونے کا خدشہ، زیادہ تر پاکستانی تارکین وطن سوار تھے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق لیبیا کے ساحل کے قریب انسانی سمگلروں کی کشتی حادثے کا شکار ہو گئی جس سے 90 افراد ڈوب کر مر گئے۔ مرنے والوں میں سے زیادہ افراد کا تعلق پاکستان سے ہے، 8 پاکستانیوں سمیت دس افراد کی لاشیں لہروں میں بہہ کر ساحل پر آ گئیں، باقیوں کی تلاش کے لیے امدادی ٹیمیں روانہ ہو گئیں ہیں۔ڈوبنے والی اس کشتی پر سوار تین افراد کے بچ جانے کی تصدیق ہو چکی ہے۔ بچ جانے والوں نے امدادی کارکنوں کو بتایا کہ کشتی پر سوار زیادہ تر تارکین وطن کی اکثریت پاکستانی شہریوں کی تھی جو اٹلی پہنچنے کی کوشش میں تھے۔انٹرنیشنل آرگنائزیشن فار مائیگریشن کے مطابق کشتی حادثے میں اپنی جانوں سے ہاتھ دھونے والے افراد پاکستانی تھے جو اٹلی تک پہنچنے کی کوشش کر رہے تھے، ان میں سے 10 تارکینِ وطن کی لاشیں ساحل پر آنے سے حادثے کا علم ہوا۔ ساحلِ سمندر پر جن افراد کی لاشیں ملیں ان میں سے دو لیبیائی باشندے اور 8 پاکستانی شامل ہیں۔ زندہ بچ جانے والوں میں سے دو تیر کر ساحل تک پہنچے جبکہ ایک کو کشتی کے ذریعے بچایا گیا۔مہاجرت کیلئے کام کرنے والے عالمی ادارے کے مطابق رواں سال یورپ تک رسائی حاصل کرنے کی کوشش کرنے والی اقوام میں پاکستانی تیسرے نمبر پر ہیں جبکہ گزشتہ برس اس فہرست میں پاکستان کا نمبر تیرہواں نمبر تھا۔ 2017ء میں لیبیا سے اٹلی پہنچنے والے پاکستانیوں کی تعداد 3138 تھی۔ رواں برس جنوری میں وہاں 240 پاکستانی پہنچے۔دوسری جانب لیبیا میں کشتی الٹنے سے پیش آنے والے حادثے پر پاکستانی دفتر خارجہ نے اپنا ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ حادثہ میں 11 پاکستانی جاں بحق ہوئے۔ ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ طرابلس میں پاکستانی سفارتخانے کو معلومات لینے کا کہا گیا ہے۔