مقبول خبریں
راچڈیل، ساہیوال جیسے شہروں کے رشتے کو مثالی بنایا جائیگا: ممبر پنجاب اسمبلی ندیم کامران
پارٹی رہنما شعیب صدیقی کو پاکستان تحریک انصاف پنجاب کا سیکریٹری جنرل بننے پر مبارک باد
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
ہم نے سچ کو دیکھا ہے جھوٹ کے جھروکوں سے!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس، امن کیلئے افغانستان سے تعاون جاری رکھنے کا اعلان
اسلام آباد: قومی سلامتی کمیٹی نے کابل میں دہشت گردی کے حالیہ واقعات کی شدید مذمت کی ہے۔ کمیٹی نے کہا ہے کہ دھماکوں پر افغان حکومت کا ردعمل غلط معلومات پر مبنی تھا۔ مشکلات کے باوجود افغان حکومت کے ساتھ امن کے لیے تعاون جاری رہے گا۔وزیرِ اعظم شاہد خاقان عباسی کے زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں چیئرمین جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی، تینوں مسلح افواج کے سربراہان اور وفاقی وزرا نے شرکت کی۔ اجلاس میں کابل میں دہشت گردی کے حالیہ واقعات کی شدید مذمت کرتے ہوئے پاک افغان سرحد پر باڑ کو مشترکہ مفاد قرار دیا گیا۔کمیٹی نے کہا کہ حکومت اور پاکستانی عوام دکھ کی اس گھڑی میں افغان عوام کے ساتھ کھڑے ہیں۔ دھماکوں پر افغان حکومت کا ردعمل غلط معلومات پر مبنی تھا۔ کچھ غیر ملکی عناصر نے دونوں ممالک میں غلط فہمیاں پیدا کیں۔ پاکستان مشکلات کے باوجود افغان حکومت کے ساتھ امن اور خطے میں سلامتی کے لیے اپنا کردار جاری رکھے گا۔قومی سلامتی کمیٹی نے کہا کہ پاکستان کا اعلیٰ سطح کا وفد شیڈول کے مطابق ہفتے کو افغانستان کا دورہ کرے گا۔ افغانستان کو سرحد پر باڑ لگانے کے پاکستانی اقدام کی حمایت کرنی چاہیے۔ کمیٹی نے افغانستان کے ساتھ سرحدی انتظامات کے حوالے سے اقدامات پر بھی اطمینان کا اظہار کیا۔