مقبول خبریں
lets talk گروپ کے زیر اہتمام کمیونٹی کو ذہنی امراض کی آگاہی کے لیے ورکشاپ کا انعقاد
صادق خان رسوائی کا باعث اور برطانیہ کے دارالحکومت لندن کو تباہ کررہے ہیں: ڈونلڈ ٹرمپ
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
سابق صدر پی ٹی آئی یارکشائر اینڈ ہمبر ریجن طاہر ایوب خواجہ کا اپنی رہائش گاہ پر محفل کا انعقاد
رنگ خوشبو سے جو ٹکرائیں تو منظر مہکے!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بھارت میں کرپشن الزامات ثابت ہونے پر 20 اراکین اسمبلی نااہل
لاہور: بھارتی الیکشن کمیشن نے سرکاری خزانے سے فائدہ اٹھانے اور کرپشن کا الزام ثابت ہونے پر 20 اراکین پارلیمٹ (ایم ایل ایز) کو نااہل قرار دے دیا۔ بھارتی میڈیا کا کہنا ہے کہ نااہل قرار دیے جانے والے اراکین کا تعلق عام آدمی پارٹی سے ہے اور ان پر الزام تھا کہ انہوں نے سرکاری خزانے سے فائدہ اٹھایا۔ اس اقدام سے عام آدمی پارٹی کی سیاست کو دھچکا لگے گا۔ عام آدمی پارٹی پر ایک اور الزام یہ بھی تھا کہ انہوں نے فائدہ دینے والے محکموں کے بڑے عہدے اپنے پاس رکھے جبکہ حاصل ہونے والی آمدنی کو اپنے ذاتی مقاصد اور مفادات کے لیے استعمال کیا۔بھارتی الیکشن کمیشن نے غبن میں ملوث تمام ہی اراکین کو نااہل قرار دیتے ہوئے تحریری فیصلہ جاری کی جس کو توثیق کرنے کے لیے کاپی صدر کو بھی ارسال کی گئی ہے۔سیاسی تجزیہ نگاروں کا کہنا ہے کہ اگر بھارتی صدر نااہل قرار دینے والے فیصلے کی توثیق کرتے ہیں تو پھر دہلی کی 20 نشتوں پر ضمنی انتخابات منعقد کیے جائیں گے۔