مقبول خبریں
نائجیریا کمیونٹی ایسوسی ایشن کا میئر چیئرٹی فنڈریزنگ ڈنر کا اہتمام ،مئیر کونسلر محمد زمان کی خصوصی شرکت
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
امریکہ نے جو کیا ایسا کوئی دوست نہیں کر سکتا، نیٹو سپلائی بند رہے گی : عمران خان
اسلام آباد ... امن کے خاتمے کیلئے جو اقدام امریکہ نے کیا ایسا دوست نہیں کر سکتے، امریکا نے امن عمل تباہ کرنے کیلئے جان بوجھ کر حکیم اللہ محسود کو نشانہ بنایا۔ جب تک امریکا ڈرون حملے بند نہیں کرے گا نیٹو سپلائی بند رہے گی۔ اسلام آباد میں بی بی سی کے نمائندے سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے عمران خان کا کہنا ہے کہ امریکی اقدام سے پاکستان مشکلات کا شکار ہوا۔ جیسے ہی تمام فریق امن پر رضامند ہوئے امریکا نے حکیم اللہ محسود کو نشانہ بنا کر ساراعمل تباہ کر دیا۔ عمران خان کا کہنا تھا کہ خیبر پختونخوا میں ایک سال میں دہشتگردی کے 180 واقعات ہوئے۔ سرحد پر واقع پولیس سٹیشنوں پر ہر روز حملے ہوتے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ جب تک بات چیت شروع نہیں کریں گے امن کیسے ہوگا۔ فوجی نقطہ نظر سے ہم پاکستان جبکہ امریکا افغانستان میں ناکام ہو چکا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان نے اس جنگ میں سوائے نقصان کے کچھ حاصل نہیں کیا۔ دہشتگردی کراچی سے بلوچستان، خیبر پختونخوا اور قبائلی علاقوں تک پھیل چکی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کے پاس امن کیلئے مذاکرات کے سوا کوئی چارہ نہیں ہے۔ ڈرون حملوں کے سائے میں امن مذاکرات کا سوال ہی نہیں پیدا ہوتا۔ دوبارہ امن مذاکرات کا صرف ایک ہی راستہ ہے کہ امریکا امن مذاکرات کے دوران ڈرون حملے نہ کرنے کی ضمانت دے۔ اگر پاکستانی حکومت یہ ضمانت لینے کے لئے کوئی اقدامات نہیں کرتی تو خیبر پختونخوا کے لوگ نیٹو سپلائی بند کر دیں گے۔