مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
‎شعور اور لاشعور کے درمیان پردہ کو ریاضت اور کوشش سے ہٹایا جا سکتا ہے ۔خواجہ شمس الدین عظیمی
‎اولڈہم:حضور قلندر بابا اولیاء کے انتالیسویں عرس مبارک کے حوالے سے ایک پروقار روحانی تقریب کا انعقاد اولڈہم کے مقامی ہال میں کیا گیا۔ تقریب کا انعقاد سلسلہ عظیمیہ کے اولڈہم مراقبہ ہال کی جانب سے کیا گیاتھا تقریب میں سلسلہ عظیمیہ کے مریدین اور گریٹر مانچسٹر سے کئی کمیونٹی عمائدین نے شرکت کی۔ اس موقعہ پر سلسلہ عظیمیہ کے روحانی پیشوا خواجہ شمس الدین عظیمی نے کراچی سے بذریعہ ویڈیو لنک شرکاء سے خطاب کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ شعور اور لاشعور کے درمیان پردہ کو ریاضت اور کوشش سے ہٹایا جا سکتا ہے ۔ اللہ کی محبت کا جذبہ جتنا مستحکم ہوتا ہے، لاشعور اتنا ہی قوی ہوتا ہے۔ ۔ عرس آرگنائزر محمد صدیق عظیمی کا کہنا تھا روح اور انسان کے تعلق کو معلوم کرنے کے لیے روحانی علم سے بہتر کوئی علم نہیں ہوسکتا۔ انسان کو اپنی اصل شناخت کو حاصل کرنے اور پہچاننے کے لیے روحانیت اور غیب کے علوم تک دسترس حاصل کرنی ہو گی جو کہ اولیاء اللہ کے قرب اور تدریس سے حاصل ہوتی ہے۔ ‎ شرکاء جن میں مسرت چوہان، راشد علی، ڈاکٹر عمران خان، مرزا بشیر شامل تھے نے روحانیت سے متعلقہ اس منفرد تقریب کو بے حد سراہا جس میں قران و حدیث کی روشنی میں انسان کو دنیا میں آنے کے مقاصد اور اس کی ذمہ داریوں کے حوالے سے بتایا گیا تھا۔تقریب میں بچوں کو روحانیت اور اولیا اللہ کی اسلام کے حوالے سے کی جانے والے خدمات، اسلام کا اصلی پیغام اور تشخص پر لیکچر بھی دیا گیا جسے نوجوانوں نے بہت پسند کیا۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر