مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
حکومت کی مجرمانہ خاموشی ، میرپور کے شہری انتہائی مضر پانی پینے پر مجبور !!
میرپور... مجید حکومت کی مجرمانہ خاموشی اور ناکامی میرپور کے شہری انسانی صحت کے انتہائی مضر پانی پینے پر مجبور ۔ حکومت نے سرکاری محکمے کی رپورٹ کو بھی آئیں بائیں شائیں کر دیا ۔ سرکاری محکمے کی رپورٹ میں وزیر اعظم کے میرپور کو پینے کے صاف پانی فراہم کے دعوے کی قلعی کھل گئی ۔ شہری بیشتر ٹیوب ویلز کا پانی پینے سے مہلک بیماریوں کا شکار ہونے لگے جبکہ حکومت نے محکمے کی جانب سے انسانی صحت کے لیے انتہائی مضر پانی کی رپورٹ کو ردی کی ٹوکری میں پھینک دیا ۔ عوامی و سماجی حلقوں کی مجید حکومت پر کڑی تنقید جو شہریوں کو پینے کا صاف پانی فراہم نہیں کر سکتے ہیں وہ تعمیر ق ترقی کیا کریں گے شہریوں کا اظہار خیال۔میڈیا کوانتہائی با و ثوق ذرائع سے معلوم ہو اہے کہ حکومت آزادکشمیر کے زیر انتظا م قائم پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ (محکمہ ماحولیات ) نے میرپور شہر میں قائم ٹیوب ویلز جہاں سے روزانہ 60لاکھ سے زائد گیلن شہریوں کو پانی سپلائی ہو رہا ہے کی ایک مانیٹرنگ رپور ٹ تیار کر کے 18جون 2013کو حکومت آزادکشمیر کو بھجوائی ہے رپورٹ میں یہ واضح نشاندہی کی گئی ہے کہ میرپور شہر کے 44ٹیوب ویلز میں سے 12ٹیوب ویلز کا پانی انسانی صحت کے انتہائی مضر اور پینے کے قابل نہیں ہے ان ٹیوب ویلز کے پانی کے استعمال سے شہری مختلف موذی امراض ،ڈائریا، ہپاٹائٹس سمیت دیگر بیماریوں میں مبتلا ہو سکتے ہیں جبکہ ماضی میں پانی کے استعمال سے لاعلمی میں شہریوں کی ایک بڑی تعداد گندا پانی پینے سے مختلف بیماریوں کا شکار ہو چکے ہیں رپورٹ میں یہ واضح کیا گیا ہے کہ میرپور شہر کے کل ٹیوب ویلز میں سے ٹیوب ویلز نمبر 9سیکٹر ڈی ون +Ve ، ٹیوب ویل نمبر 4 سیکٹر بی فائیو اکبر روڈ +Ve،ٹیوب ویل نمبر 11بھلوٹ +Ve ،ٹیوب ویل نمبر 12 سیکٹر ڈی تھری اڈہ لانچ +Veِ ٹیوب ویل سیکٹر F2 قائد اعظم اسٹیڈیم +Veِ ٹیوب ویلز سیکٹر F/3 +Ve ،ٹیوب ویل ویوپوانٹ پارک +Ve ،ٹیوب ویل نمبر 16تھوتھال +Veِ ٹیوب ویل نمبر 19سیکٹر C/4 بور +Ve ،ٹیوب ویل نمبر 05 نزد گورئمنٹ سکول 2 C/ِ ٹیوب ویل نمبر 10بندرال +VEِ ٹیوب ویل نمبر 14 +Ve کا پانی انسانی صحت کے لیے انتہائی خطرناک اور نا قابل استعمال ہے ان ٹیوب ویلز کے پانیوں کے استعمال سے شہری مختلف خطرناک بیماریوں کا شکار ہو سکتے ہیں لیکن دوسری جانب حکومت آزادکشمیر نے محکمہ ماحولیات کی رپورٹ کو ردی کی ٹوکری کی نذر کر دیا ہے اہم اور خطرناک نوعیت کی رپورٹ پر تاحال کسی بھی قسم کے اقدامات دیکھنے میں آرہے ہیں کیونکہ روز بروز متا ثرہ ٹیوب ویلز کے پانیوں کے استعمال سے شہری آئے روز مختلف موذی امراض کے منہ میں جا رہے ہیں جبکہ شہریوں کو خبر دار ہو کر ان تمام ٹیوب ویلز کا پانی فوری طور پر ترک کر نا دینا چاہیے کیونکہ محکمہ پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ ( محکمہ ماحولیات ) کی واٹر مانیٹرنگ رپورٹ میں یہ واضح کیا گیا ہے ان 12متا ثرہ ٹیوب ویلز کا پانی بالکل پینے کے قابل نہیں ہے لیبارٹری ٹیسٹ کے لیے ان تمام ٹیوب ویلز کے نمونے لیبارٹریوں میں بجھوائے گئے تھے جہاں پر پانی کے نمونوں سے یہ نتائج سامنے آئے ہیں کہ ان ٹیوب ویلز کا پانی انسانی صحت کے لیے انتہائی مضر اور مختلف بیماریوں کا موجب بن رہا ہے جس پر ضلعی انتظامیہ سمیت حکومت آزادکشمیر نے مجرمانہ خاموشی اختیار کر رکھی ہے اور پانی کے استعمال سے آئے روز شہریوں کو مختلف بیماریاں لاحق ہو رہی ہیں جبکہ محکمہ کی جانب سے بھجوائی گئی رپورٹ پر آج تک کوئی نوٹس نہ لیا گیا ہے جبکہ آئندہ چند ماہ میں ان ٹیوب ویلز کے پانی کے استعمال سے شہری مختلف موذی امراض کا شکار ہو جائیں گے ۔ ( تحقیقاتی رپورٹ محمد بلال رفیق )