مقبول خبریں
راچڈیل کیسلمئیرسنٹر میں کمیونٹی کو صحت مند رہنے،حفاظتی تدابیر بارے آگاہی ورکشاپ کا انعقاد
یورپی پارلیمنٹ میں قائم ’’فرینڈز آف کشمیر گروپ‘‘ کی تنظیم سازی کردی گئی
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
ہم نے سچ کو دیکھا ہے جھوٹ کے جھروکوں سے!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ملک میں جمہوریت نہیں مجبوریت کا نظام ہے،مستقبل مصطفوی انقلاب سے روشن ہوگا: ڈاکٹرطاہر القادری
لندن ... ڈرون حملوں کے خلاف حکمران عوام سے جھوٹ بول کر جعلی غصہ دکھا رہے ہیں حکمرانوں نے پاکستان کو عالمی طاقتوں کے ہاتھوں گروی رکھ دیا ہے ملک میں جمہوریت نہیں مجبوریت کا نظام رائج ہے مصطفوی انقلاب سے انشاء اللہ پاکستان کا مستقبل روشن ہو گا ان خیالات کا اظہار منہاج القرآن کے سرپرست اعلی شیخ الاسلام ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے گذشتہ روز ویڈیولنک کے ذریعے برطانیہ سمیت دنیا بھر کے ممالک میں ورکزکنونشن کے اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے کیا ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں نام نہاد جمہوریت نے عوام سے جنیے کا حق بھی چھین لیا ہے مجبوریت کے اس نظام نے عوام کے بنیادی حقوق غصب کر رکھے ہیں حقیقت میں یہ جمہوری نظام نہیں بلکہ شہنشاہیت ،سیاسی آمریت اور سیاسی بربریت کا نظام ہے جس کا مقصد ملک کے بچے وسائل کو لوٹنا ہے اس کرپٹ نظام کو تحفظ فراہم کرنے والے حکمرانوں نے کروڑوں غریبوں ،بے کس ،بے سہارا اور مجبور لوگوں کو چوروں، ڈاکوؤں، دہشت گردوں اور اغواء کار درندوں کے رحم و کرم پر چھوڑ دیا ہے ڈاکٹر قادری نے کہا کہ قائد اعظم نے ملک کا جو تحفہ دیا تھا آج اس ملک میں مڈل کلاس اور کروڑوں غریبوں کا کوئی عمل دخل نہیں رہ گیا بلکہ حکمرانوں نے اپنے کاروباری اور تجارتی مفادات کے لیے ملک کو اپنی بزنس ائمپائر بنا کر اسے بڑی طاقتوں کے ہاتھوں گروی رکھ دیا یہی وجہ ہے کہ حکمرانوں کا عوام سے کوئی واسطہ نہیں رہ گیا بلکہ حکمران عوام سے سراسر جھوٹ بولتے ہیں عالمی طاقتوں کے ساتھ ان کی سیٹلمنٹ کچھ اور ہوتی ہے اور پارلیمنٹ کے فلور پر اور میڈیا کے سامنے پریس کانفرنسزمیں کچھ اور بیان کرتے ہیں بپھر میڈیا کو ایک نئی بحث میں الجھا دیا جاتا ہے ڈاکٹر قادری نے کہا کہ وزیر اعظم دورہ واشنگٹن میں کچھ اور طے کر کے آئے ہیں اور ملک میں عوام کے سامنے غم و ٖغصہ دکھایا جا رہا ہے انھوں نے کہا کہ میں یہ بات ذمہ داری سے کہہ رہا ہوں کہ ڈرون حملوں کے خلاف یہ کہنا کہ یہ ہمارے مذاکراتی عمل پر ڈرون حملہ ہے اور ہماری امن کی کوششوں پر حملہ ہے جعلسازی اور جھوٹ ہے پارلیمنٹ کو اعتماد میں لینے اور اس حوالے سے اے پی سی کرنے کے لیے باقاعدہ تاریک رکھ دی جائے گی تاکہ یہ معاملہ التواء کا شکار ہو کر دب جائے اور اس دوران کئی اورایشوز آجائیں گے جس کے بعد قوم یہ باتیں بھول جائے گی اور پھر سارا معاملہ کلیتا دفن ہو جائے گا۔ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ میں قوم کے سامنے باقاعدہ ثبوت پیش کر رہا ہوں کہ 23اکتوبر2007ء کے جاری کردہ وائٹ ہاؤس کے مشترکہ بیان کے مطابق امریکا میں حالیہ ملاقات کے دوران ڈرون حملوں کے متعلق کوئی معاملہ زیر بحث نہیں آیا حکمرانوں کو عوام اور میڈیا کے سامنے جھوٹ بولتے ہوئے شرم آنی چاہیے حقیقت یہ ہے کہ موجودہ حکومت کی پالیسی سال 2007ء کی پرویز مشرف کی پالیسی کا تسلسل ہے یہ زرداری صاحب کی پالیسی کا بھی تسلسل ہے لیکن عوام کے سامنے ڈھونگ رچایا جا رہا ہے انہوں نے اپنے پیغام میں کہا کہ انقلاب کے لیے کارکن فائنل معرکہ کی تیاری مکمل کر لیں تبدیلی اور پر امن انقلابی مہم میں امیر اور غریب سب کو شامل کیا جائے گا کیونکہ ہم امیروں کے دشمن نہیں ہیں بلکہ اس معرکہ میں امیروں اور غریبوں دونوں کو ساتھ لیکر چلیں گے ۔