مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان برطانیہ کا اہم اتحادی،پاک افواج کیساتھ مضبوط اور گہرے روابط ہیں:میجر جنرل ڈنکن
مانچسٹر:پاک افواج کے ساتھ ہمارے گہرے اور مضبوط روابط ہونے کے ساتھ قریبی تعلقات ہیں اور پاکستان برطانیہ کا سب سے اہم ترین اتحادی ہے،برطانیہ بھر میں پاکستانی و کشمیری نژاد برطانوی شہری تمام شعبہ جات کے ساتھ برطانوی فوج میں ایک بڑی تعداد میں اپنی خدمات سر انجام دے رہے ہیں،پاکستان کی پیشہ وارانہ افواج کی صلاحیتوں سے ذاتی طور پر بے حد متاثر ہوں اس بنا پر بہت ہی قریبی رابطہ ہے،دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے سکیورٹی اداروں کی جانی قربانیاں مثالی ہیں اور انہیں بین الاقوامی سطح پر سراہایا جانا چاہئے،ان خیالات کا اظہار برطانوی فوج کے میجر جنرل ڈنکن نے برٹش مسلم ہیریٹیج سینٹر میں پہلی بار منسٹری آف ڈیفنس برطانیہ کی جانب سے دو پاکستانی نژاد برطانوی مسلمانوں کو کمیونٹی خدمات کے صلہ میں دیئے گئے ایوارڈز کی ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا،انہوں نے مزید کہا کہ اس طرح کی تقریب سے کمیونٹی کے اندر باہمی یگانگت کو مزید فروغ دیا جا سکتا ہے،برٹش مسلم ہیریٹیج سینٹر کے چیئرمین چوہدری ناصر محمود نے ایوارڈ ملنے کے بعد کہا کہ وہ عرصہ دراز سے نارتھ ویسٹ کی کمیونٹی کی بلا تفریق خدمت میں مصروف عمل ہیں،SMILEچیریٹی کے نوجوان راہنما ابو بکر سرور جو دنیا بھر میں پیش آنے والے نا گہانی واقعات میں اپنی چیریٹی کی طرف سے مالی امداد لیکر پہنچتے ہیں نے ایوارڈ ملنے کے بعد کہا کہ انہیں نادار،مصیبت زدہ لوگوں کی خدمت کر کے دلی سکون ہوتا ہے حال ہی میں روہنگیا کے مسلمانوں کی خدمت کرنے کا موقع ملا،اس تقریب میں برطانوی پارلیمنٹ کے ممبر و شیڈو وزیر افضل خان،ممبر یورپین پارلیمنٹ امجد بشیر کے علاوہ کمیونٹی کی بڑی تعداد نے بھرپور شرکت کی۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر