مقبول خبریں
آشٹن گروپ کی جانب سے پوٹھواری شعر و شاعری کی محفل،شعرا نے خوب داد وصول کی
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
برطانوی پارلیمنٹ میں پاکستانی و کشمیری ارکان پارلیمنٹ مسئلہ کشمیر کیلئے لابنگ کریں: سردار مسعود
لندن:بھارت میں نریندر مودی کی حکومت پاکستان کے خلاف تین محاذوں پر برسرپیکار ہے، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج انتہائی ظلم و ستم ڈھاتے ہوئے کشمیریوں کی نسل کشی میں مصروف ہے دوسری طرف سے آزاد کشمیر کے عوام کے خلاف آئے روز لائن آف کنٹرول کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بلااشتعال فائرنگ کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہے جس سے ہزاروں بے گناہ شہید اور زخمی ہوچکے ہیں ، تیسری طرف بلوچستان کے اندر ٹی ٹی پی اور دوسری دہشت گرد تنظیموں کی ہر لحاظ سے مدد کرکے صوبہ کے اندر بے چینی اور افراتفری پھیلا رہا ہے۔ ہمیں بحیثیت قوم ہندوستان کی ان محاذوں پر پاکستان کے خلاف کئے جانے والے اقدام پر متحد ہو کر مقابلہ کرنا ہوگا اگر ہم نے بھارت کے خلاف آواز بلند نہ کی تو کشمیریوں کا کوئی پرسان حال نہ ہوگا۔ ان خیالات کا اظہار آزاد حکومت ریاست جموں وکشمیر کے صدر سردار مسعود احمد خان نے معروف نوجوان سیاسی و کمیونٹی رہنما راجہ اعجاز محمود کی طرف سے منعقدہ عشائیہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سردار مسعود خان نے کہا کہ برطانوی پارلیمنٹ میں پاکستانی و کشمیری ارکان پارلیمنٹ مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے موثر لابنگ کریں۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح مقبوضہ کشمیر میں نوجوانوں، عورتوں اور بچوں کو ظلم و بربریت کا نشانہ بنایا گیا اس کی مثال پوری دنیا میں کہیں نہیں ملتی۔ انہوں نے کہا کہ ہم برطانوی پارلیمنٹ کے اندر بھی بھارتی ظلم کے خلاف آواز اٹھائی ہے۔ اور اس بات پر مسرت کا اظہار کیا کہ خاصی تعداد میں ہمارے ارکان پارلیمنٹ میں موجود ہیں جن کے بہتر انداز میں کشمیر کے دیرینہ مسئلہ کو اجاگر کرنے کے لئے تمام ارکان پارلیمنٹ کو لابنگ کرنا ہوگی۔ عشائیہ تقریب میں برطانوی ممبر آف پارلیمنٹ راجہ افضل خان، راجہ یاسین خان اور ناز شاہ نے بھی خصوصی شرکت کی۔ انہوں نے میزبان راجہ اعجاز کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے لندن میں ان کو اکٹھے ہونے کا موقع فراہم کیا۔ ایم پی ناز شاہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ میرا تعلق آزاد کشمیر سے ہے ان کو اس بات کی خوشی ہے کہ بطورکشمیری ایم پی مسئلہ کو بہتر انداز میں بین الاقوامی فورمز پر اجاگر کرنے کی کوشش کررہی ہوں انہوں نے کہا کہ ہمیں موجودہ ٹوری حکومت سے کوئی امیدنہیں کہ وہ مسئلہ کشمیر کو حل کروانے میں کسی قسم کی مدد کرے گی کیونکہ موجودہ حکومت برطانیہ کے اندر حکومت چلانے میں ناکام ہوچکی ہے۔ راجہ افضل خان ایم پی نے کہا کہ ہم خوش قسمت ہیں کہ اس وقت آزاد کشمیر کے صدر ایک کہنہ مشق سفارت کار اور بہترین انسان ہیں جو کشمیر کا مقدمہ ہر جگہ بہتر انداز میں اجاگر کررہے ہیں۔ ایم پی راجہ یاسین خان نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے ہمیں ہر قسم کے اختلافات بھلا کر ایک پلیٹ فارم پر اکٹھے ہونا ہوگا جب تک ہم متحد نہیں ہوتے تب تک بھارت ہماری اس کمزوری سے فائدہ اٹھاتا رہے گا۔ عشائیہ قریب میں سابق میئر کونسلر چوہدری لیاقت علی، چیئرمین برٹش مسلم فرینڈ آف لیبر چوہدری شوکت علی، چوہدری عرفان احمدس،سیدقمررضا،چوہدری محمد علی،ساجد خان، راجہ سکندر خان، چوہدری افضل محمود، پروفیسر شاہد اقبال، عبدالرزاق قاضی، چوہدری صابر اقبال، چوہدری دلپذیر، چوہدری ظفر اقبال ایڈووکیٹ، نجابت بھٹی، راجہ امتیاز الرحمن، چوہدری لطیف، سردار شفقت، راجہ اعظم خان اور دیگر نے شرکت کی۔ تمام مہمانوں کے میزبان راجہ اعجاز محمود شاہ کا عشائیہ تقریب منعقد کرنے پر شکریہ ادا کیا۔