مقبول خبریں
دی سنٹر آف ویلبینگ ، ٹریننگ اینڈ کلچر کے زیر اہتمام دماغی امراض سے آگاہی بارے ورکشاپ
پارٹی رہنما شعیب صدیقی کو پاکستان تحریک انصاف پنجاب کا سیکریٹری جنرل بننے پر مبارک باد
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
جس لڑکی نے خواب دکھائے وہ لڑکی نابینا تھی!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
جنگی جرائم کے ارتکاب میں برٹش مسلم رہنما کو بنگلہ دیش میں سزائے موت کا حکم !!
لندن ... برطانیہ میں آباد ایک بنگلہ نژاد رہنما کو بنگلہ دیش میں موت کی سزا سنائی گئی ہے۔ معین الدین چوہدری برطانیہ میں مسلمانوں کی معروف تنظیم مسلم کونسل آف بریٹن کے بانیوں میں سے ہیں۔ بنگلہ حکومت کا ان پر الزام ہے کی ١٩٧١ کی جنگ میں وہ جنگی جرائم کے مرتکب ہوئے تھے۔ اسی الزام میں ایک امریکی مسلمان شہری اشرف الزمان کو بھی سزائے موت سنائی گئی ہے۔ ان دونوں کو بنگلہ دیش کی آزادی کے آخری ایام میں جنگ آزادی کے 18 حامیوں کو اغوا اور قتل کرنے کے گیارہ معاملوں میں مجرم قرار دیا گيا۔ اور جنگی جرائم کی ایک مخصوص عدالت میں ان کی غیر موجودگی میں سماعت کی گئی۔ سرکاری وکلا کا کہنا ہے کہ چودھری معین الدین البدر نامی ملیشیا گروپ کے رکن تھے۔ البدر گروپ پر یہ الزام ہے کہ اس نے پاکستانی فوج کے ساتھ بنگلہ دیش کی آزادی کے حامی رضاکاروں، اساتذہ اور صحافیوں کے خلاف جنگ کے آخری دنوں میں لڑائی کی تھی۔ بنگلہ دیش کی برسر اقتدار جماعت عوامی لیگ کی جانب سے سنہ 2010 میں قائم کردہ یہ ٹریبیونل جنگ آزادی کے دوران پاکستان کا ساتھ دینے والے مقامی افراد کے خلاف مقدمات چلا رہا ہے۔ حکومت کے مطابق اس جنگ میں تیس لاکھ افراد مارے گئے تھے۔