مقبول خبریں
دار المنور گمگول شریف سنٹر راچڈیل میں جشن عید میلاد النبیؐ کے حوالہ سےمحفل کا انعقاد
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان میں برطانیہ جیسا بھائی چارہ اور محبت و اخوت دیکھنے کی آرزو ہے: ثمینہ پیرزادہ
بریڈفورڈ ... بیانڈ دی مینگو فلم فیسٹول میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کیلئے برطانیہ آیئں پاکستان کی نامور اداکارہ و ہدایئتکارہ ثمینہ پیر زادہ نے کہا ہے کہ بریڈفورڈ نے مجھے ہمیشہ بہت پیار دیا ہے اور بسا اوقات مجھے لگتا ہے کہ بریڈفورڈ ہی میرا شہر ہے۔ انہوں نے کہا جس طرح مختلف رنگوں، نسلوں اور مذاہب کے ماننے والے لوگ مل جل کر پیار محبت سے اس ملک میں رہتے ہیں میری خواہش ہے کہ میرا پاکستان بھی ایسا ہوجائے۔ ثمینہ پیرزادہ نے کہا کہ انہیں بریڈفورڈ کی تاریخی عمارتیں اور ملٹی کلچرل رونقیں دیکھتے ہوئے لگتا ہے کہ برطانیہ میں اگر کوئی شہر اپنی زندگی میں صوفیانہ رنگ اور میلوں ٹھیلوں کی رونق لا سکتا ہے تو وہ یہی شہر ہے انہوں نے کہا کہ 1998ء میں جب پہلی مرتبہ اس شہر نے اپنے فلم فیسٹیول میں میری فلم کو جگروں اور میں پہلی مرتبہ اس فیسٹیول میں شامل ہوئی تو اسی دن سے میں اس شہر کی محبت میں مبتلا ہوگئی۔ جو آج بھی قائم ہے۔ اور میں اسی محبت کی وجہ سے دوبارہ آپ کے درمیان موجود ہوں۔ اس موقع پر انہیں فیسٹیول انتظامیہ کی طرف سے لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارد بھی دیا گیا۔ جس پر انہوں نے کہا کہ آپ نے ایک ایوارڈ کے ذریعہ سے مجھے جو عزت بخشی اس کی مجھے اتنی ہی خوشی ہے جب پہلی مرتبہ میں نے اور میرے خاوند نے اپنا تمام مال متاع لگانے کے بعد اپنی پہلی فلم کی کامیابی پر محسوس کیا تھا۔ ثمینہ پیرزادہ نے امید ظاہر کی کہ وہ اگلے برس بریڈفورڈ کی مدد سے بریڈفورڈ میں ایک صوفی فیسٹیول کرنے میں کامیاب رہیں گے جس میں وہ برصغیر سمیت دنیا بھر کے انوکھے اور نرالے موسیقاروں کے ساتھ پیار و محبت کا پیغام عام لوگوں تک پہنچائیں گی۔