مقبول خبریں
نائجیریا کمیونٹی ایسوسی ایشن کا میئر چیئرٹی فنڈریزنگ ڈنر کا اہتمام ،مئیر کونسلر محمد زمان کی خصوصی شرکت
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کسی بھی معاشرے کی تعمیر و ترقی میں تعلیم کا ہونا لازمی ہے: پیر محمد مقصود مدنی
مانچسٹر:کسی بھی معاشرے کی تعمیر و ترقی میں تعلیم کا عام ہونا لازمی امر ہے،بحیثیت مسلمان ہمارا فریضہ ہے کہ اپنی اولاد کو دنیاوی تعلیم کے ساتھ دینی تعلیمات سے مکمل آگاہی دینا اولین ذمہ داری ہے،اسی فلسفہ کو حقیقیت کا روپ دینے کیلئے عرصہ دراز سے بچیوں کو دینی تعلیم دینے کا بیڑا اٹھایا،انتہائی مشکل ترین حالات کے باوجود ثابت قدمی اور رب العالمین پرکامل اعتماد کا دامن تھامے آگے بڑھتا رہا اور اب جامع مسجد نور الاسلام کا سنگ بنیاد رکھنے جا رہے ہیں جو پاکستان کے شہر فیصل آباد میں اپنی نوعیت کا منفرد ادارہ ہو گا جہاں پر طالبات کے ساتھ طلبہ کی رہائش کیلئے کیمپس کا سنگ بنیاد بھی رکھا جائے گا اور نادار اور غریب بچے،بچیوں کو بالکل مفت تعلیم دی جائے گی،ان خیالات کا اظہار جامع مسجد نور الاسلام و ادارہ ہذا کے بانی پیر طریقت،رہبر شریعت،اہل سنت والجماعت کے داعی پیر ابو احمد محمد مقصود مدنی نے بذریعہ ٹیلی فونک گفتگو میڈیا سے خصوصی طور پر بات چیت کرتے ہوئے کیا،انہوں نے مزید کہا کہ جامع نور الاسلام میں نادار اور انتہائی غریب طلبا و طالبات کو ناظرہ قرآن سے لے کر ترجمہ و تفسیر،عالمیہ دورہ حدیث کی مفت تعلیم دے کر انہیں معاشرے کا مفید شہری بنایا جائے گا،انہوں نے کہا کہ اس کے علاوہ نور الاسلام مفت ہسپتال کا قیام بھی عمل میں لایا جائے گا جہاں پر نادار اور غریب افراد کے علاج معالجہ سمیت مفت ادویات فراہم کی جائیں گی،نیک نیتی ایمانداری اور خدا وند کریم کے بھروسہ پر کام شروع کر دیا ہے،وسیلہ بھی بن جائے گا،انہوں نے بیرون ممالک خصوصاً برطانیہ بھر میں بسنے والے پاکستانی و کشمیری مخیر حضرات سے درخواست کی ہے کہ وہ پہلی فرصت میں انکے منصوبہ جات بارے آگاہی حاصل کریں اس کے بعد اگر دل و دماغ مطمئن ہو تو پھر اس نیک کام کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کیلئے دل کھول کر امداد کریں تاکہ غربا کی مدد کی جا سکے،یاد رہے کہ اس ادارہ نورالاسلام فیصل آباد کو پہلے ہی صاحبزادہ محمد حسیب مدنی کی زیر نگرانی چلایا جا رہا ہے اور وہ اسے شفافیت کے ساتھ چلا رہے ہیں اور وہاں پر صرف نادار و غریب بچیوں کو تعلیم دی جاتی ہے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر