مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
طالبان قومی دہارے میں شامل ہو چکے تھے، امریکی ڈرون صورتحال کوخراب کردیتے ہیں:حامدکرزئی
آکسفورڈ ...افغان صدر حامد کرزئی نے کہا ہے کہ امریکہ ڈرون حملے بند کرے اب امن کو موقع دینے کا وقت آ گیا ہے افغانوں کی خون ریزی بند کر کے گزشتہ دس سال کے اقدامات کو آگے بڑھانا ہو گا خواتین افغان قومی دھارے میں شامل ہو چکی ہیں جبکہ سکول کالج اور یونیورسٹیاں بھی آباد ہو گئی ہیں وہ گزشتہ شام آکسفورڈ یونیورسٹی یونین کے تاریخی ڈیبیٹ ہال میں سینکڑوں طلباء سے کھچا کھچ بھرے ہال میں خطاب کر رہے تھے افغان صدر نے 2001ء اور حالیہ دنوں میں افغانستان میں تعلیم،صحت،معاشی ترقی،حقوق نسواں سمیت امن و امان کی صورتحال کا تفصیلی موازنہ کیا ان کا کہنا تھا کہ2014ء افغانستان سے اتحادی فوجوں کے جانے کا سال ہے امن و امان نے جڑیں پکڑ لی ہیں جبکہ جمہوری عمل کے نتیجہ میں طالبان سمیت تمام طبقات قومی دہارے میں شامل ہو چکے ہیں امریکی ڈرون اور بمباری اس صورتحال کو خراب کر رہی ہے،دہشت گرد آبادیوں میں نہیں بلکہ تربیتی کیمپوں میں ہیں ڈرون اور بمبوں کا رخ اس جانب موڑا جائے بے گناہ عوام پر مظالم کا رخ بندہونا چاہئے حامد کرزئی نے طلباء کے سوالات کے جواب دئیے،انہوں نے کہا کہ نواز شریف حکومت سے ان کے دوستانہ اور برادرانہ تعلقات ہیں دونوں ملکوں کے درمیان اعتماد بحال ہو رہا ہے اور خوشگوار تعلقات میں استحکام پیدا ہو رہا ہے حامد کرزئی نے کہا کہ اسفند یار ولی اور محمود اچکزئی سے ان کے گہرے مراسم ہیں دونوں شخصیات دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کی مضبوطی کیلئے مثبت کردار ادا کر رہی ہیں،انہوں نے نواز شریف سے لندن میں حالیہ مذاکراتی عمل کو بہتری کی جانب اہم پیش رفت قرار دیتے ہوئے برطانوی وزیر اعظم کا شکریہ ادا کیا۔ان کا کہنا تھا کہ افغانستان میں جمہوری نظام نے جڑیں پکڑنا شروع کر دی ہیں میڈیا آزاد ہے ادارے مضبوط ہو رہے ہیں آئندہ ہفتے تین ہزار افراد پر مشتمل قومی جرگہ ہونے جا رہا ہے جو اتحادی فوجوں کی بعد کی پالیسی اور افغانستان میں مستقل بنیادوں پر امن و امان کے قیام پر حکمت عملی مرتب کرے گا افغان پولیس سیکورٹی کے حوالے سے اپنے فرائض کی ادائیگی کیلئے پر اعتماد اور مکمل طور پر تیار ہے حامد کرزئی نے یقین دہانی کرائی کہ آئندہ قومی انتخابات منصفانہ ہوں گے اور ووٹر اپنی مکمل آزادی کے ساتھ حق رائے دہی استعمال کر سکیں گے،انہوں نے برطانیہ سمیت یورپی و دیگر اتحادی ملکوں کی مدد اور قربانیوں کو بار بار خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ اب امن کے قیام کا وقت ہے طالبان بھی افغان ہیں انہیں آئندہ انتخابات میں حصہ لینے کا پورا موقع ملے گا لیکن کسی کو امن کے بدلے انسانی حقوق اور جموریت کے خلاف رکاوٹ نہیں بننے دیا جائے گا۔