مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
حج و عمرہ کی ادائیگی،ضروری سہولیات کی فراہمی پرسمجھوتا نہیں کرینگے:ڈائریکٹر حاجی ٹورز
مانچسٹر:سعودی عرب کی شاہی حکومت کے سربراہ فرماں روا شاہ سلمان نے اعلان کیا ہے کہ اگر دنیا بھر سے مسلمان دو سال کے اندر دوبارہ حج و عمرہ کی ادائیگی کیلئے ویزہ حصول بارے درخواست دیں گے تو ان سے دو ہزار ریال فیس وصول کی جائے گی،حج اسلام کا اہم ستون ہے اور ہر مسلمان جو صاحب مال ہو ادائیگی فرض ہے برطانیہ بھر سے اس نیک مقصد کیلئے جانے والے احباب کو سوچ سمجھ اور پوری تحقیق کے بعد ایسے ایجنٹس یا ٹور آپریٹرز کے ذریعے حج و عمرہ کی ادائیگی کیلئے جائیں جو سعودی عرب کی حکومت کے منظور شدہ ایجنٹ ہوں اور برطانوی حکومت بھی انہیں تسلیم کرے،ان خیالات کا اظہار حاجی ٹورز کے ڈائریکٹر حاجی محمد عارف نے میڈیا کو دیئے گئے اپنے ایک بیان میں کیا،انہوں نے مزید کہا کہ قوانین کا اطلاق اس ماہ10اکتوبر2017سے شروع ہو چکا ہے،انہوں نے کہا کہ ہم نے اس بات کا تہیہ کیا ہوا ہے کہ حجاج کرام اور عمرہ کی ادائیگی کیلئے جانے والے افراد کو تمام ضروری سہولیات کی مکمل فراہمی پر کوئی سمجھوتا نہیں کیا جائے گا اور تجریہ کار راہنمائوں سے استفادہ حاصل کیا جاتا ہے تاکہ زیارات اچھے طریقے سے کروائی جائیں،مقصد انسانیت کی خدمت اولین ترجیح ہے اس پورا کرنے کیلئے تگ و دو میں مصروف ہیں اور ہمیں اس بات پر فخر ہے کہ ہمارے ساتھ حج و عمرہ کی ادائیگی کیلئے جانے والے افراد مطمئن ہوتے ہیں،انہوں نے کہا کہ ہمیں اپنی نوجوان نسل کو دین اسلام سے محبت اور رب کریم کے گھر اور حضرت محمدؐ کے روضہ رسول کی زیارت کیلئے انہیں ضرور حج و عمرہ کی ادائیگی کیلئے اپنے ساتھ لے جائیں کیونکہ اسلام کی خدمت مستقبل میں انہوں نے ہی کرنی ہے اور بحیثیت مسلمان یہ ہم پر فرض ہے ہم اس سلسلے میں معاونت کیلئے موجود ہیں۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر