مقبول خبریں
دی سنٹر آف ویلبینگ ، ٹریننگ اینڈ کلچر کے زیر اہتمام دماغی امراض سے آگاہی بارے ورکشاپ
پارٹی رہنما شعیب صدیقی کو پاکستان تحریک انصاف پنجاب کا سیکریٹری جنرل بننے پر مبارک باد
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
جس لڑکی نے خواب دکھائے وہ لڑکی نابینا تھی!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
خواتین کو ہراساں کرنے کیخلاف بالی ووڈ اداکارہ ریچا چڈا بھی میدان میں آ گئیں
ممبئی:خواتین کو ہراساں کرنے کیخلاف اب بالی ووڈاداکارہ ریچا چڈا بھی میدان میں آگئیں ۔ریچا چڈا کی جانب سے لکھے گئے بلاگ میں انہوں نے ’’می ٹو‘‘ ٹرینڈ کا ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ 2 ہفتے سے ان سے بار بار پوچھا جا رہا ہے کہ وہ ’’می ٹو‘‘ کے بارے میں کیا سوچتی ہیں جس پر انہوں نے لکھا کہ بھارت میں تو خواتین کے خلاف زبانی، بصری اور جنس کی بنیاد پر ہراساں کرنا معمول کی روایت ہے ۔اس ملک میں ’’ریپ‘‘ کو کسی کی ’’عزت لوٹنا‘‘ کہا جاتا ہے جسے جرم سمجھا ہی نہیں جاتا ۔اداکارہ ریچا چڈانے لکھا بھارت میں خواتین کا مالک اہل خانہ اور مردوں کو سمجھا جاتا ہے ، شادی کے بعد کسی بھی خاتون کی نوکری کرنے سمیت دیگر فیصلے اسکا شوہر اور سسرال والے کرتے ہیں ۔بالی ووڈاداکارہ کے مطابق بھارت میں ہر 22 منٹ کے اندر ایک خاتون کا ’’ریپ‘‘ ہوتا ہے جبکہ یہاں خواتین زندہ رہنے کیلئے جنسی طور پر ہراساں ہونے کی صورت میں ٹیکس ادا کر رہی ہیں ۔