مقبول خبریں
ن لیگ برطانیہ و یورپ کا نواز شریف،مریم نواز اور کیپٹن صفدر کی سزائیں معطل ہونے پر اظہار تشکر
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ٹیلرسن کی وزیراعظم سے ملاقات، آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی بھی موجود
اسلام آباد:وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹیلرسن نے وزیر اعظم ہاؤس میں ملاقات کی۔ ملاقات میں وزیر خارجہ، وزیر دفاع، سیکرٹری خارجہ، آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی بھی موجود تھے۔ ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور خطے کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ملاقات میں پاک امریکہ تعلقات اور دہشتگردی کے خلاف جنگ کے معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ذرائع کے مطابق، وزیر اعظم نے امریکی وزیر خارجہ کو دہشتگردی کے خلاف کئے گئے اقدامات سے آگاہ کیا اور کہا کہ پاکستان نے دہشگردی کے خلاف جنگ میں کسی بھی ملک سے زیادہ قربانیاں دی ہیں۔یاد رہے کہ پاکستان پہنچنے سے پہلے گزشتہ روز ریکس ٹیلرسن نے پاکستان سے تمام تر تعلقات کا انحصار طالبان کے خلاف ایکشن سے مشروط کر دیا تھا۔ دوسری جانب، گزشتہ روز بگرام ایئربیس پر ریکس ٹیلرسن سے ملاقات کرنے والے افغان صدر اشرف غنی بھی نئی دہلی پہنچ گئے ہیں۔کیا ڈو مور کی آڑ میں پاکستان کے خلاف پھر گھیرا تنگ کرنے کی کوششیں جاری ہیں؟ طالبان کو مذاکرات کی دعوت دینے والا امریکہ پاکستان کو ایکشن لینے پر کیوں مجبور کر رہا ہے؟ کیا امریکہ اپنی تمام تر ناکامیوں کا ملبہ پاکستان پر ڈالنا چاہتا ہے؟وزیر اعظم نے امریکی وزیر خارجہ سے ملاقات میں کہا کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بڑی کامیابیاں حاصل کیں اور جیت کیلئے پرعزم ہیں، دہشتگردی کے خاتمے کیلئے دو طرفہ تعاون اور اقتصادی تعلقات کا فروغ چاہتے ہیں۔امریکی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ پاکستان امریکا کیلئے اہمیت کا حامل ہے، خطے کی سکیورٹی اور قیام امن کیلئے پاکستان کا کردار انتہائی ضروری ہے، پاکستان کے ساتھ امریکہ کے سٹریٹجک تعلقات ہیں جو مشترکہ اہداف کے حصول کیلئے اہم ہیں۔امریکی وزیر خارجہ کے دورے کے بعد امریکی سفارتخانے کی جانب سے جاری کردہ اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ دو طرفہ تعلقات مشترکہ اہداف کے حصول کیلئے اہم ہیں اور پاکستان سے دہشتگردی کے خاتمے کیلئے کہا گیا ہے۔