مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
22 اور 27 اکتوبر ریاست جموں و کشمیر کی تاریخ کے سیاہ دن ہیں: سردار امجداشرف
اولڈہم،22 اور 27 اکتوبر ریاست جموں و کشمیر کی تاریخ کے وہ تاریک دن ہیں کہ جب اس کی تقسیم اور وحدت کو پارہ پارہ کیا گیا قبائلی لیٹروں کی درندگی مہاراجہ کی مکاری اور عیاری ہندوستان کے ساتھ الحاق اس دیش کی تقسیم کا سبب بنا ۔ ان خیالات کا اظہار جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ برانچ کی کمیٹی کے ممبر سردار امجداشرف نے اولڈہم میں ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا. انھوں نے مزید کہا کہ صدیوں سے شخصی راج کے جبر کا شکار محنت کشوں نے بیگار کے خلاف مذہبی آزادی کےلئے اپنے معاشی اور سیاسی آزادی مہاراجہ ہری سنگھ کی حکمرانی کے خلاف بغاوت کی تھی ۔جسے برصغیر کی مذہبی تقسیم کے ساتھ جوڑ کر کشمیر کی واحدنیت کو پارہ پارہ کیا گیا ۔ 22اکتوبر کی قبائلی درندگی نے دھرتی کی حرمت کو روندا تھا اور 27 اکتوبر کو ہری سنگھ کی دہلی دربار کے ساتھ الحاق اور ہندوستانی فوج کی کشمیر میں داخلہ تقسیم اور غلامی کی وجہ بنی ۔ جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی ان دنوں کو کشمیری قوم کے تاریک اور سیاۃترین تصور کرتی ہے اجلاس سے واجد ایوب نٹار احمد سلیم یاس سماب الطاف نے بھی خطاب کیا ۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر