مقبول خبریں
کشمیر سالیڈیرٹی کیلئے یکم فروری سے 11فروری تک تقریبات منعقد کرائی جائیں گی
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
روہنگیا مسلمانوں کی مذہب کے نام پر نسل کشی قابل قبول نہیں: افضل خان
مانچسٹر:برطانیہ چونکہ برما کی حکومت کوفوجی ٹریننگ اور دوسرے دفاعی تعاون کیلئے عملی طور پر مصروف عمل ہے اس لئے برطانوی حکومت کو اس بارے ممبران پارلیمنٹ کو اعتماد میں لینے کی ضرورت ہے اور تمام حقائق بیان کئے جانے چاہئیں اسی سلسلے میں کافی تگ و دو کے بعد17اکتوبر بروز منگل پارلیمنٹ میں اس اہم مسئلہ پر تین گھنٹے کی بحث ہو گی جو کہ ایک مثبت قدم ہے کیونکہ برما کی فوج جسطرح روہنگیا مسلمانوں کی مذہب کے نام پر نسل کشی کر رہی ہے اور جو حیوانوں سے بھی بڑھ کر مظالم ڈھانے کے ساتھ جس طرح لوگوں کو ذبح کیا جا رہا ہے کسی صورت بھی قابل قبول نہیں انتہائی اقدامات اٹھانے کی اشد ضرورت ہے،ان خیالات کا اظہار ممبر برطانوی پارلیمنٹ و شیڈو وزیر افضل خان نے ہیومن کلب یوکے،اے کے انٹرٹینمنٹ،گولڈن آرٹس کی جانب سے روہنگیا مسلمانوں کے لئے چندہ جمع کرنے کی ایک مہم کے موقع پر کیا،انہوں نے مزید کہا کہ مظلوم انسانیت کی خدمت کرنے کا جذبہ ہمارے ایمان کا جز و لازم ہے ہم سب کو اپنی بساط کے مطابق انکی مدد کرنی چاہئے اور میں انتظامیہ کی کاوش کو سراہتا ہوں جو یہاں سے رقم جمع کر کے اپنے ذاتی خرچہ پر وہاں جا رہے ہیں ہم سب کیلئے قابل فخر بات ہے،کونسلرز عابد چوہان،باسط شیخ نے بھی اپنے خیالات اور اس دورہ بارے حاضرین کو بتایا اور دل کھول کر عطیات دینے بارے درخواست کی،خواجہ وسیم الطاف نے کہا کہ ہیومن کلب یوکے مالی امداد کو مستحقین تک پہنچانے کیلئے تمام تر اقدامات اٹھائے گی،انسانی حقوق کے عالمی علمبرداروں کو اس سلسلے میں کردار ادا کرنا چاہئے اور وہاں پر ہونے والے مظالم بند کروا کر مہاجرین کو مستقل بنیادوں پر رہائش گاہ اور زندگی کی بنیادی سہولیات کی فراہمی کو ممکن بنانا چاہئے،اس کے بعد میوزیکل پروگرام میں پاکستان سے آئے ہوئے نوجوان گلو کار افی کے نے پرانے اور نئے گیت سنا کر پروگرام کے ماحول کو گرما دیا۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر