مقبول خبریں
جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ برانچ کے زیرِ اہتمام فکر مقبول بٹ شہید ورکز یونیٹی کنونشن کا انعقاد
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
نیب کا دائرہ کار عدلیہ ،فوج تک بڑھانے کی بجائے دیانتداری سے کام کر نیکی ضرورت :شہباز شریف
لاہور:وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے کہا ہے نیب کا دائرہ کاراعلیٰ عدلیہ اورفوج تک وسیع کرنے کے بجائے دیانتداری سے کام کر نے کی ضرورت ہے ، دونوں اداروں میں احتساب کے لیے اپنا نظام اور طریقہ کار موجود ہے جس میں وقت کے تقاضوں کے مطابق بہتری لائی جاسکتی ہے ۔ نیب کرپٹ اور ملکی خزانہ لوٹنے والوں کا احتساب کرنے میں ناکام رہا ،صرف شریف خاندان پر احتساب کے تیر چلانا کہاں کا انصاف ہے ؟ احتساب کرنا ہے تو بلا تفریق اور بلا جھجک سب کا کیا جائے تاہم احتساب کے نام پر انتقام کا نشانہ نہیں بنایا جانا چاہیے ۔اپنے بیان میں انہوں نے کہا کرپشن سے ملک کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا ، عدالتی احکامات کے باوجود کرپٹ عناصر کے خلاف کارروائی نہ ہونے کی مثالیں موجود ہیں اس لئے احتساب کا کڑا نظام وقت کی اہم ضرورت ہے ، نیب میں اصلاحات اور کارکردگی بہتربنانا ہو گی ، نیب کواپنا کام دیانتداری اور پسند نا پسند سے بالاتر ہوکر کرنا چاہیے جب کہ نیب کے دائرہ کار پر سیاسی جماعتوں کے قول و فعل میں تضاد قابل افسوس ہے ،کرپشن ایک ناسور ہے جس نے پورے ملک کو اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے ،احتساب کا نظام بہتر ہوگا تو کرپشن کا خاتمہ اور ملک خوشحالی کی راہ پر گامزن ہو گا اور ہر محکمہ میں میرٹ کا بول بالا ہوگا، بینکوں سے اربوں روپے کے قرضے معاف کرانے والوں کے خلاف بھی کارروائی کی جائے تاکہ قوم کی لوٹی گئی رقم واپس آسکے ۔وزیراعلیٰ پنجاب سے جمعیت اہل حدیث کے سربراہ سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی کے امور اورملکی صورتحال پر تبادلہ خیال کیاگیا، وزیراعلیٰ نے کہا ملکی سلامتی اور قیام امن کے لیے مذہبی ہم آہنگی کا فروغ ناگزیر ہے ،ختم نبوت کا عقیدہ ہمارے ایمان کی بنیاد ہے،وزیراعلیٰ پنجاب سے ترک سرمایہ کار گروپ کے چیئرمین احمت البراک بھی ملے ،احمت البراک نے پنجاب میں صحت ، ہاؤسنگ اور توانائی کے شعبوں میں سرمایہ کاری میں گہری دلچسپی کا اظہار کیا ، اس موقع پر وزیر اعلٰی نے کہا پاکستان اور ترکی کی لازوال دوستی مفید معاشی تعاون میں ڈھل رہی ہے ، ترکی کے شعبہ صحت میں تعاون سے دکھی انسانیت کو فائدہ پہنچے گا ،پنجاب میں سرمایہ کاری کو قدر کی نگاہ سے دیکھا جائے گا ۔