مقبول خبریں
کشمیر میں مظالم کیخلاف اقدامات نہ اٹھائے تو تباہی کی ذمہ داری بین الاقوامی کمیونٹی پر ہو گی:نعیم الحق
ڈیبی ابراھم کی قیادت میں ممبران پارلیمنٹ اور کمیونٹی رہنماؤں کی لارڈ طارق احمد سے ملاقات
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کی وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر اور شاہ غلام قادر سے ملاقات
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
راجہ نجابت حسین کا مسئلہ کشمیر پر بحث میں حصہ لینے پر ارکان یورپی پارلیمنٹ کو خراج تحسین
سوچنے کے موسم میں سوچنا ضروری ہے!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان کی آزادی کے بعد اعلیٰ عہدیداروں نے قانون کو تابے کیا ہوا ہے: سید عبدالباسط شاہ
اولڈہم:پاکستان میں جب بھی عدلیہ کسی طاقتور کا احتساب کرتی ہے تو وہ قانون کو اپنے ہاتھوں میں لیکراسکی دھجیاں اڑا دیتا ہے یہی ہمارا المیہ ہے کہ آج ستر سال سے بھی زائد عرصہ آزادی کو حاصل کئے گزر چکا ہے سرمایہ داروں،جاگیرداروں اور دیگر ریاستی اداروں میں بیٹھے اعلیٰ عہدیداروں نے قانون کے تابے ہونے کی بجائے اسے اپنے تابے کئے ہوا ہے جو کسی بھی معاشرے کی تباہی و بربادی کا باعث ہوتا ہے،پاکستان مسلم لیگ ن کے شر پسند عناصر نے چند وکلاء کے ساتھ مل کر احتساب عدالت میں جو ہلڑ بازی کا ڈرامہ رچایا ہے اس کے پیچھے صرف ایک ہی منطق ہے کہ اپنے نا اہل اور کرپٹ راہنما سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف پر احتساب عدالت میں پیش نہ ہونے پر فرد جرم عائد کرنا تھا اس فیصلہ کو نہ ہونے دیا جائے لیکن ان لوگوں کو یہ جان لینا چاہئے کہ اب عدالتوں پر حملہ آور ہو کر خوف و ہراس پھیلا کر فیصلے اپنی مرضی کے کروانے کا وقت گزر چکا ہے قانون کے ہاتھ مضبوط ہو چکے ہیں اور اس کے رکھوالے بلا خوف آزادانہ،منصفانہ اور قانون کے عین مطابق فیصلے کرنے کی جرات رکھتے ہیں ایسے تخریبی حربے بے کار ہیں،ان خیالات کا اظہار تحریک انصاف برطانیہ کے جنرل سیکرٹری سید عبدالباسط شاہ مشوانی نے میڈیا کے ساتھ ایک خصوصی نشست کے موقع پر کیا،انہوں نے مزید کہا کہ شریف برادران کی سیاست کا باب پانامہ اور دیگر کرپشن کیسز میں کڑی سزائوں کے بعد ہمیشہ کیلئے بند ہو جائے گا اور انکے حواری جو کہ لوٹ مار میں ملوث رہے ہیں جلد عدالت کے کٹہرے میں کھڑے ہوں چاہے انکا تعلق کسی سیاسی جماعت یا پھر ریاست کے کسی اور ادارے کے ساتھ ہو تو میں دعوے سے کہتا ہوں کہ ملک تیزی سے ترقی کی جانب گامزن ہو گا،ہم بیرون ممالک بسنے والے انصاف،حق و سچ کے ساتھ کھڑے ہیں اور ملک کی بدنامی کا باعث بننے والے افراد کا کڑا احتساب ہونا چاہئے اور انکی منزل جیل کی سلاخیں ہونی چاہئیں۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر