مقبول خبریں
بین الاقوامی میڈیا نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کی کلی کھول دی ہے:سردار مسعود خان
ڈیبی ابراھم کی قیادت میں ممبران پارلیمنٹ اور کمیونٹی رہنماؤں کی لارڈ طارق احمد سے ملاقات
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کی وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر اور شاہ غلام قادر سے ملاقات
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
9ستمبر کو اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے باہر بھرپور مظاہرہ کرینگے:راجہ نجابت حسین
سوچنے کے موسم میں سوچنا ضروری ہے!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
طوفان کی نذر ہونے والے چار افراد میں شامل جوڑا دس سال سے اکٹھے خوشگوار زندگی بسر کر رہا تھا
سلائو ... برطانیہ میں آنے والے حالیہ طوفان نے دارالحکومت اور گرد و نواح میں وہ تباہی تو نہیں پھیلائی جس کی وارننگ دی گئی تھی تاہم ایسی یادیں ضرور چھوڑ گیا جو رہتی دنیا تک عزیز و اقارب کو رلاتی رہیں گی۔ ہیتھرو ایئر پورٹ سے متصل علاقے ہنسلو میں ایک بدقسمت گھر ایسا بھی تھا جہاں اس طوفان کی وجہ سے قیامت ٹوٹ پڑی۔ حادثے کا شکار ہونے والا گھر 46 سالہ سہیل اور اسکی گرل فرینڈ کا تھا جس میں اس لئے آگ بھڑک اٹھی کہ طوفان سے ایک کمزور درخت ٹوٹ کر گیس پائپ لائن پر گرا۔ یہ گیس پائپ لائن اسی گھر کی تھی جس نے فوری طور پر دو ہنستی بستی زندگیوں کو موت کی نیند سلا دیا۔ ان کا مکان تباہ ہوگیا تھا ان دونوں کی لاشیں ملبے تلے سے برآمد ہوئی تھیں۔ یہ جوڑا جو اطلاعات کے مطابق گزشتہ 10 سال سے ایک ساتھ زندگی گزار رہا تھا طوفان کے دوران ہلاک ہونے والے 4 افراد میں شامل تھا۔ ڈوروٹا کولاسنسکا ہیکنی کونسل میں ٹریفک لائٹس کی دیکھ بھال کے کام سے منسلک تھی۔ کونسل کے ہیلتھ اورکمیونٹی سروسز کے کارپوریٹ ڈائریکٹر کم رائٹ نے کہا کہ وہ انتہائی فرض شناس اور محنتی خاتون تھی۔ انھوں نے کہا کہ یہ انتہائی المناک حادثہ تھا ہماری دعائیں ان کے ساتھ ہیں۔ جو لوگ سہیل اختر کو جانتے ہیں جو کہ سروسز کی ایک فرم ایٹوز کیلئے آئی ٹی کنٹریکٹر کے طور پر کام کرتے تھے انھوں نے ان کی موت کو انتہائی افسوسناک واقعہ قرار دیا اور کہا کہ یہ خبر سن کر وہ اپنے حواس کھو بیٹھے ان کے ایک قریبی دوست شیلڈن ہوک شو نے کہا کہ وہ ہر دلعزیز تھے اور ہر ایک کیلئے وقت نکالتے تھے وہ ہمیشہ ہنساتے تھے ہم ان کی کمی محسوس کریں گے۔