مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بلیو وہیل چیلنج گیم کا اینڈ موت، دنیا بھرمیں 130 افراد بھینٹ چڑھ گئے
لاہور: بلیو وہیل چیلنج گیم ایک ایسا کھیل ہے جس کی جیت اس کے کھیلنے والے کی موت سے ہوتی ہے، دنیا بھرمیں ایک سو تیس افراد اس خونی گیم کی بھینٹ چڑھ چکے ہیں۔ قاتل موبائل گیم بلیو وہیل چیلنج کا دنیا بھر میں چرچا ہے، اس گیم کا اینڈ اپنے پلیئر کی موت کے ساتھ ہوتا ہے۔ روس میں بننے والی یہ گیم دنیا بھر میں 130 افراد کی جان لے چکی ہے۔ حال ہی میں بھارتی شہر جودھ پور کی ایک سترہ سالہ لڑکی اس خونی گیم کا شکار ہوئی، گیم میں 50 روز میں 50 مختلف ٹاسک کے ساتھ پلئیر کو نفسیاتی طور پر سخت چیلنجز سے گزارا جاتا ہے، خود کو بلیڈ سے زخمی کرنا، رات کو ڈراؤنی فلمیں دیکھنا، منشیات کا استعمال، اونچی عمارت پر چڑھنا سمیت، گیم کا انسٹرکٹر آن لائن صارف کے دماغ کو کنٹرول کرتا ہے، اور آخری روز اس کےدماغ کو قابو کر کے خود کشی پر مجبور کر دیا جاتا ہے۔ بلیو وہیل گیم کو ایجاد کرنے والے 21 سالہ فلپ کا تعلق روس سے ہے، جو اس وقت اسکول جانے والی 16 لڑکیوں کو خودکشی پر مجبور کرنے کے الزام میں زیر حراست ہے۔