مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی روہنگیا مسلمانوں کے زخموں پر مزید نمک چھڑکنے لگے
نئی دہلی/ نیپیدو: مسلم دشمنی میں اندھے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی مسلمانوں پر ظلم ڈھانے والی حکومت کی پشت پناہی کرنے میانمار پہنچے، جہاں انہوں نے نوبیل انعام یافتہ آنگ سان سوچی کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں روہنگیا مسلمانوں پر تشدد کو فورسز پر حملوں کا ردعمل قرار دیا۔ادھر روہنگیا مسلمانوں کا بے سروسامانی کی حالت میں زمینی، دریائی اور سمندری راستے سے بنگلا دیش پہنچنے کا سلسلہ بھی جاری ہے۔ 25 اگست سے اب تک 3 لاکھ بے بس لوگ بنگلا دیش پہنچ چکے ہیں۔ کئی خلیج بنگال کی بے رحم موجوں کا نشانہ بن گئے۔ بنگلا دیش پہنچنے والے روہنگیا مسلمانوں نے بتایا کہ بدھ کی صبح تین کشتیاں سمندر میں ڈوب گئیں جس میں 100 افراد سوار تھے۔ ان میں سے 6 لاشیں بہہ کر سمندر کنارے آ چکی ہیں جن میں بچے بھی شامل ہیں۔ دوسری جانب میانمار کی فوج سرحدوں پر بارودی مواد نصب کر رہی ہے تا کہ روہنگیا مسلمان واپس نہ آ سکیں۔ بنگلا دیش نے سرحد پر بارودی سرنگیں نصب کرنے پر احتجاج کیا ہے۔