مقبول خبریں
الیکشن 2019 کیلئے کنگزوے وارڈ راچڈیل سے لیبر پارٹی کی مس ایلس رائٹ نامزد
بھارتی لابی نے کشمیر کانفرنس کوانے کے لئے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کیے: شاہ محمود قریشی
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بابا گرمیت کی گرفتاری کے بعد فسادات پھوٹ پڑے، 28 ہلاک، سینکڑوں زخمی
چندی گڑھ: پنچ کلا کی عدالت نے روحانی پیشوا گرو گرمیت کو دو خواتین سے زیادتی کا مجرم قرار دیتے ہوئے جیسے ہی گرفتار کرنے کا حکم دیا بھارت کی کئی ریاستوں میں تشدد پھوٹ پڑے ہیں۔ دہلی، ہریانہ اور پنجاب سمیت متعدد مقامات پر تشدد کی خبریں ہیں۔ انڈین میڈیا رپورٹس کے مطابق اب تک اٹھائیس افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں جبکہ 250 افراد زخمی ہو کر ہسپتالوں میں پہنچ گئے ہیں۔پنجاب کی حکومت نے سیکیورٹی کے پیش نظر پنجاب کے کئی شہروں میں ہائی الرٹ جاری کرتے ہوئے پولیس، انتظامیہ اور فوج کو بھی طلب کیا تھا لیکن صورتحال پر قابو پانا مشکل ہوتا جا رہا ہے۔ پولیس کی جانب سے مظاہرین پر لاٹھی چارج اور آنسو گیس کا بھی استعمال کیا جا رہا ہے۔ رپورٹس ہیں کہ ان ہلاکتوں کے پیچھے بھی گرو گرمیت کے حامیوں کا ہاتھ ہے۔اطلاعات ہیں کہ پرتشدد واقعات میں مشتعل افراد نے ٹرینوں، ریلوے سٹیشنز اور میڈیا گاڑیوں کو بھی نذر آتش کر دیا ہے۔ اس صورتحال میں چندی گڑھ ہائیکورٹ نے سخت موقف اختیار کرتے ہوئے گرو گرمیت رام کی تمام املاک اور جائیدادیں ضبط کرنے کا حکم جاری کر دیا ہے اور کہا ہے کہ اس کے ذریعے ہونے والے نقصانات کی تلافی کی جائے۔خیال رہے کہ گرو گرمیت رام سنگھ کو 2002 میں اپنی دو بھگت خواتین سے زیادتی کے الزام میں مقدمے کا سامنا تھا۔ عدالت سے سزا کے بعد فوج نے روحانی پیشوا کو گرفتار کر کے چھاؤنی منتقل کر دیا ہے۔ خبریں ہیں کہ گرمیت سنگھ کو 7 سال قید کی سزا ہو سکتی ہے۔