مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بھارتی ریاست اترپردیش کے ہسپتال میں آکسیجن کی کمی: 30بچے ہلاک
نئی دہلی: انڈین ریاست اترپردیش کے ضلع گورکھپور کے ایک ہسپتال میں آکسیجن کی فراہمی میں کمی کی وجہ سے 30 بچوں کی ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔ اطلاعات ہیں کہ یہ بچے صرف اڑھتالیس گھنٹوں میں موت کی وادی میں چلے گئے۔ دوسری جانب یوگی آدتیاناتھ کی حکومت نے واقعہ کی ذمہ داری لینے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بچوں کی اموات کو آکسیجن کی بندش سے منسلک نہ کیا جائے، اس سانحہ کی انکوائری کی جائے گی۔لوک سبھا میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے رکن کملیش پسوان نے بچوں کی اموات کی وجہ جاننے کیلئے بابا راگھیو داس میڈیکل کالج کا دورہ کیا۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ ہلاک ہونے والے بچوں میں سے زیادہ تر بچے انتہائی نگہداشت کی وارڈ میں زیر علاج تھے۔ریاستی حکومت نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ بچوں کی اموات کو آکسیجن کی کمی سے جوڑنا درست نہیں ہے جبکہ ضلعی انتظامیہ نے بھی یہی موقف اختیار کیا تاہم یہ تسلیم کیا ہے کہ ہسپتال کی جانب سے واجبات میں تاخیر کی وجہ سے آکسیجن کی سپلائی میں تعطیل آیا تھا۔