مقبول خبریں
ن لیگ برطانیہ و یورپ کا نواز شریف،مریم نواز اور کیپٹن صفدر کی سزائیں معطل ہونے پر اظہار تشکر
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
تنازع کشمیر پر اگر اب جنگ چھڑی تو وہ جوہری ہو گی عالمی برادری تماشائی کا کردار چھوڑ دے
لندن ... 27 اکتوبر 1947 کی یاد میں جب بھارتی افواج نے یلغار کرکے کشمیر کے ایک بڑے حصے پر قبضہ کر لیا تھا ہر سال دنیا بھر میں یوم سیاہ منایا جاتا ہے جس میں مقبوضہ کشمیر کے عوام سے اظہار یکجہتی کیا جاتا ہے۔ برطانوی دارالحکومت میں اس سال بھی بھارتی ہائی کمیشن کے باہر یوم سیاہ منایا گیا جس میں مختلف شہروں سے کشمیری رہنمائوں نے شرکت کی جن میں سابق ایگزیکٹو ڈارئریکٹر کشمیر سنٹر برسلز بیرسٹر مجید ترمبو، آزاد کشمیر سے برطانیہ کے دورے پر آئے ہوئے سابق سینئر وزیر ملک نواز، ممبر کشمیر کونسل چوہدری محمد خاں، مسلم لیگ ن آزاد کشمیر کے برطانیہ میں رہنما زبیر اقبال کیانی، افتخار کھتیاڑوی، راجہ نواز، نفیس سرور، ملک افضل، و دیگر شامل تھے۔ اس موقع پر بھارتی ظلم و ستم کے خلاف شدید نعرے بازی کی گئی۔ مقررین نے کہا کہ کشمیری نصف صدی سے حق خودارادیت کے منتظر ہیں ۔ تنازع کشمیر پر اگر اب جنگ چھڑی تو وہ جوہری ہو گی۔ عالمی برادری تماشائی کا کردار ادا کرنا چھوڑ دے۔ سابق سینئر وزیر اور سینئر نائب صدر مسلم کانفرنس ملک محمد نواز خان نے کہا کہ 66 سالوں سے مسئلہ کشمیر جوں کا توں پڑا ہوا ہے۔ بھارت اس کا فائدہ اٹھاکر کشمیریوں کا قتل عام کررہا ہے۔ دنیا اس ظلم کو روکے اور کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق موقع دیا جائے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کریں۔