مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
سونو نو نگم کے بعد گلوکارہ سچترا کرشن مورتی کا اذان کے بارے میں متنازع تبصرہ
ممبئی: بالی ووڈ سنگر سونو نگم کے بعد اب گلوکارہ سچترا کرشن مورتی نے اذان کے بارے میں متنازع تبصرہ کیا ہے جس کی وجہ سے انھیں سوشل میڈٰیا پر سخت تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ گزشتہ روز سچترا نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر لکھا کہ میں صبح 4:45 پر گھر پہنچی ہوں اور اذان کی آواز سے میرے کان پھٹ رہے ہیں، اس سے زیادہ بے وقوفی تو کوئی ہو ہی نہیں سکتی ہے جس میں کسی پر زبردستی مذہب پرستی مسلط کی جاتی ہے۔ گلوکارہ سچترا نے اپنے ایک دوسرے ٹویٹ میں کہا کہ وہ صبح اپنے مطابق اٹھتی ہے اور اپنے طریقہ سے پوجا ارچنا کرتی ہے۔سچترا کرشن مورتی کے اس متنازع اور نفرت انگیز بیان کی سخت تنقید کی جا رہی ہے۔ انڈین سیاستدان جوہی سنگھ نے کہا ہے کہ اذان سے تو دل کو سکون ملتا ہے، یہ کس طرح لوگ ہیں جنہیں اذان کی آواز پریشان کرتی ہے۔ ایک اور سیاستدان ابو اعظمی نے بھی شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے گلوکارہ پر شدید تنقید کی۔