مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
جسے چاہوں معاف کر دوں، میرے پاس مکمل اختیار ہے: صدر ڈونلڈ ٹرمپ
واشنگٹن:غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ وہ کسی کو بھی معاف کر سکتے ہیں کیونکہ ان کے پاس مکمل اختیار اور طاقت ہے۔ ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر کے ذریعے ایک پیغام میں کہا گیا کہ صدر کے پاس معاف کرنے کی مکمل طاقت اور اختیار موجود ہے، اور اس بات سے سب اتفاق کرتے ہیں، لیکن ایسا کیوں سوچیں کیونکہ اب تک کیا جانے والا جرم صرف ہمارے خلاف انکشافات ہیں، جعلی خبر۔خیال رہے کہ امریکی صدر کے پاس کسی کو بھی معاف کرنے کا مکمل اختیار اور طاقت موجود ہے، چاہے ابھی ان پر جرم ثابت نہ ہوا ہو یا الزام تک نہ لگایا گیا ہو۔ ایک امریکی اخبار نے اپنے ایک حالیہ مضمون میں دعویٰ کیا تھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے یہ جاننے کی کوشش کی کہ بطور امریکی صدر اسن کے پاس اپنے اہلخانہ، ساتھیوں اور حتیٰ کہ خود کو بھی کسی بھی قسم کی قانونی کارروائی سے استثنا دینے کا کتنا اختیار ہے؟ کیونکہ ٹرمپ چاہتے ہیں کہ وہ انتخابات میں روسی مداخلت اور اپنی مہم سے جڑے افراد کے روسی حکام کے ساتھ روابط کی تفتیش کے معاملے کو ختم کر دیں۔