مقبول خبریں
یوم عاشور کے حوالہ سے نگینہ جامع مسجد اولڈہم میں روح پرور،ایمان افروز محفل کا اہتمام
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی دہشتگردی جاری،مزید2کشمیری نوجوان شہید،مکمل ہڑتال
سرینگر:مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے ریاستی دہشتگردی کی تازہ کارروائی میں مزید2بے گناہ نوجوان شہیدکردئیے جس سے گزشتہ24گھنٹوں کے دوران شہیدکئے جانیوالے نوجوانوں کی تعداد بڑھ کر 5 ہو گئی ۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق غاصب فوجیوں نے مزید2نوجوانوں کوضلع بانڈی پورہ کے علاقہ گریز میں تلاشی اورمحاصرے کی کارروائی کے دوران فرضی جھڑپ میں گولیاں مارکرشہید کیا،اس سے قبل گزشتہ شب ضلع اسلام آباد کے علاقے اچھہ بل میں تین نوجوانوں شوکت لوہار ، مظفر حجام اور ناصر احمد کو ایک جعلی مقابلے میں شہید کردیاگیاتھا،گزشتہ روزانکی نمازجنازہ میں ہزاروں افرادنے کرفیواوردیگرپابندیاں توڑتے ہوئے شرکت کی جن میں بچے اورخواتین بھی شامل تھیں۔دریں اثنابے گناہ شہادتوں کیخلاف اسلام آباد،ترال،پلوامہ سمیت مقبوضہ وادی کے مختلف حصوں میں مکمل ہڑتال رہی، تمام دکانیں، کاروباری مراکز اور تعلیمی ادارے بند رہے جبکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی آمدورفت معطل تھی،آزادی کے متوالوں نے تمام ترپابندیاں روندتے ہوئے سڑکوں پرآکراحتجاجی مظاہرے کئے ،اس دوران فضاآزادی کے حق میں اوربھارت کے خلاف فلک شگاف نعروں سے گونجتی رہی،قابض فورسزنے اس موقع پرطاقت کابے دریغ استعمال کرتے ہوئے درجنوں مظاہرین زخمی اورمتعددگرفتارکرلئے ۔مزیدبرآں مسلسل کرفیواورسخت پابندیوں کے باعث کشمیری عوام کو ادویات سمیت دیگر اشیائے ضروریہ کی شدیدقلت کا سامنا ہے ۔ جموں سے شائع ہونے الے ایک اخبار کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں اقتصادی سرگرمیاں ٹھپ ہوکر رہ گئی ہیں اور اگر یہ صورتحال اسی طرح جاری رہی تو اقتصادی تباہی آئے گی،کیونکہ گزشتہ2 ہفتوں سے مشکل سے ہی اشیائے ضروریہ لانیوالاکوئی ٹرک وادی کشمیر میں داخل ہوا ہوگا۔علاوہ ازیں ضلع بارہمولہ کے علاقے اوڑی میں بھارتی فوج کے افسرمیجر شیکھر تھاپاکوایک ماتحت فوجی نے معمولی تلخ کلامی پر گولی مار کر ہلاک کردیا۔