مقبول خبریں
نیلی مسجد یو کے اسلامک مشن کیلئے فنڈزریزنگ اپیل پر ڈنر کا اہتمام ،مئیر کونسلرمحمد زمان کی شرکت
بھارتی لابی نے کشمیر کانفرنس کوانے کے لئے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کیے: شاہ محمود قریشی
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
کشمیر‘ جہاں خواب بھی آنسو کی طرح ہیں!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
فوجی جیپ سے باندھنے کا واقعہ بھول نہیں پا رہا: کشمیری نوجوان فاروق احمد ڈار
بڈگام:گزشتہ دنوں مقبوضہ کشمیر میں ایک نوجوان کو جیپ کے آگے باندھنے والے بھارتی فوج کے میجر نتن گوگوئی کو انڈین آرمی چیف نے اعزازی میڈل سے نوازا، دوسری جانب ضلع بڈگام سے 30 کلومیٹر دور گاؤں چل کے رہائشی نوجوان فاروق احمد ڈار بھارتی فوج کے اس اقدام کو ناانصافی سے تعبیر کرتے ہیں۔ فاروق ڈار وہی نوجوان ہیں جنھیں میجر گوگوئی نے اپنی جیپ کے آگے باندھ کر گاؤں گاؤں گھمایا تھا۔اپنے اس کرب کا لفظوں میں اظہار کرتے ہوئے 26 سالہ فاروق ڈار کہتے ہیں کہ بھارتی فوج نا انصافی کو فروغ دے رہی ہے۔ انھیں ہمیشہ سے اس بات کا یقین تھا کہ ہم کشمیریوں کیلئے بھارتیوں کے پاس کوئی انصاف نہیں ہے، میجر گوگووئی کو ایوارڈ سے نوازنے سے اس کو سچ ثابت کر دیا ہے۔ اس اقدام سے بھارتی حکومت اور ان کی فوج کی سوچ کھل کر سامنے آ گئی ہے کہ وہ ہم کشمیریوں کے بارے میں کیا احساسات رکھتے ہیں۔ ڈار نے سوال اٹھایا کہ فوج تو شہریوں کی حفاظت کیلئے ہوتی ہے کہ انھیں ہی اپنی حفاظت کیلئے ڈھال بنانے کیلئے۔فاروق احمد ڈار نے کہا کہ میں ابھی تک اس واقعے کے اثرات سے باہر نہیں نکل پا رہا۔ بھارتی فوج نے جس طرح میری سوچ کو مجروع کیا اور میری تذلیل کی، شاید میں اسے ساری عمر نہ بھلا پاؤں۔ فاروق کا کہنا ہے کہ انھیں ابھی تک اس بات کا دھڑکا لگا رہتا ہے کہ فوج کسی وقت بھی اسے اٹھا لے گی۔ میں شدید ذہنی دباؤ کا شکار بن چکا ہوں۔ میں ٹھیک سے کام کاج بھی نہیں کر پا رہا۔ فاروق نے کہا کہ بھارتی فوج نے میرے ساتھ جو سلوک کیا دنیا کی کوئی میڈیسن اس کا مداوا نہیں بن سکتی۔