مقبول خبریں
اوورسیز پاکستانیز فائونڈیشن کو فعال کردار ادا کرنے کیلئے عملی اقدامات اٹھا ئے ہیں:بیرسٹر امجد
بے نظیر بھٹو کو جمہوریت کے دشمنوں نے قتل کیا، برطانوی وزیر اعظم
تارک وطن بزرگوں نے محنت کا جو بیج بویا تھا آج اسکے ثمرات آنا شروع ہوگئے ہیں
خوشحالی شریفوں اور زرداریوں کیلئے نہیں غریبوں کیلئے ہونی چاہئے: عمران خان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کی فائرنگ، مزید 2 نوجوان شہید
کونسلر وحید اکبر کا آزاد کشمیر کے جسٹس شیراز کیانی کے ا عزاز میں عشائیے کا اہتمام
برطانیہ کے ساحلی شہر سائوتھ ہیمپٹن میں ملی نغموں کی گونج، ڈپٹی میئر کی خصوصی شرکت
برما میں مسلمانوں کا قتل عام انسانی حقوق کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہے:وہیپ اینڈریو
کرپٹ خان
پکچرگیلری
Advertisement
سپوت پاکستان سابق میئر ڈاکٹر جیمز شیرا کیلئے ’’فریڈم آف دی بورو آف رگبی‘‘ کا اعزاز
رگبی ... برطانیہ کی بھرپور سیاسی و سماجی زندگی میں رہتے ہوئے پاکستان کا علم بلند رکھنے والے سپوت کونسلر ڈاکٹر جیمز شیرا کو ایک خصوصی تقریب میں ’’فریڈم آف دی بورو آف رگبی‘‘ کے اعزاز سے نوازا گیا۔ رگبی کی لارڈ میئر سلی بریگ نے برطانوی پاکستانی ماہر تعلیم اور سابق میئر رگبی کونسلر ڈاکٹر جیمز شیرا کو ایوارڈ دیا۔وزیر اعظم پاکستان اور اپوزیشن پارٹی کے قائد بلاول بھٹو زرداری نے بھی ڈاکٹر جیمز شیرا کو اس موقع پر مبارکباد دی۔ ڈاکٹر جیمز شیرا کو اس سے پہلے ستارہ پاکستان، ایم بی ای اور ڈسٹنگوئشڈ فورمانائٹ ایوارڈ بھی مل چکا ہے۔ یہ ایوارڈ کونسل کے لیڈر کونسلر مائیک سٹوک نے تجویز کیا اور مسز کلیئر ایڈورڈز اور جیری روڈ ہائوس نے اس کی تائید کی۔ پہلی بار ایسا ہوا ہے کہ تینوں بڑی پارٹیوں یعنی کنزرویٹو، لیبر اور لبرل ڈیموکریٹس نے متفقہ طور پر اس ایوارڈ کی تائید کی ہے۔ تقریب میں سیاست دانوں، ماہرین تعلیم، میڈیا کے افراد اور بورو آف رگبی کے اعلیٰ حکام نے شرکت کی جن میں چیف ایگزیکٹو واروکشائر کائونٹی کونسل مونیکا فورگارٹی اور چیئرمین واروکشائر ہیلتھ اتھارٹی پروفیسر بریان سٹوٹین بھی شامل تھے جنہوں نے کونسلر ڈاکٹر جیمز شیرا کی خدمات کو شاندار خراج تحسین پیش کیا۔ کمانڈر مخدوم چشتی، فرید چشتی اور پاکستان ہائی کمیشن لندن کے فرسٹ سیکرٹری آصف خان نے بھی اس موقع پر اظہار خیال کیا۔ ڈاکٹر شیرا نے کائونٹی کونسل کے پارک میں چیری کا پودا بھی لگایا۔ اس پودے کا انتخاب پاکستانی پرچم کے رنگوں کے ساتھ اس کے تعلق کی بناء پر کیا گیا کہ اس کے سفید پھول اور سبز پتے پاکستان اور برطانیہ کی دوستی کو ظاہر کرتے ہیں۔ وزیراعظم پاکستان نواز شریف نے ڈاکٹر شیرا کو مبارکباد کا خط بھیجا ہے اور بلاول بھٹو نے بھی ان کے نام ایک تعریفی پیغام بھیجا ہے۔ ایوارڈ کے لئے ڈاکٹر شیرا کی نامزدگی سے اب تک کئی معروف شخصیات تعریفی خطوط اور آرٹیکلز تحریر کر چکی ہیں جن میں پاکستان کے دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس زکریا، کامران حیدر رضوی، سابق وزیراعظم بے نظیر بھٹو کے انسانی حقوق کے مشیر اور بانی وزارت انسانی حقوق اور پاکستان ایسوسی ایشن فار پیس فل اینڈ ٹولرینٹ کلچر کے علاوہ معروف سکالر اور برطانیہ و سکاٹ لینڈ کے لئے سابق سفیر ڈاکٹر اکبر ایس احمد بھی شامل ہیں جو اس وقت امریکن یونیورسٹی واشنگٹن میں ابن خلدون چیئر آف اسلامک سٹڈیز میں خدمات انجام دے رہے ہیں۔ دیگر شخصیات میں کاونٹری کے لارڈ بشپ ڈاکٹر کرسٹوفر کاکس ورتھ اور برطانیہ میں پاکستان کے سابق ہائی کمشنر واجد شمس الحسن شامل ہیں۔ تقریب میں باضابطہ دعوت پر میئر آف رگبی کے دفتر کے بیان میں کہا گیا کہ ڈاکٹر شیرا کو یہ ایوارڈ رگبی کے عوام کے لئے ان کی نمایاں خدمات، سالہا سال سے ملکی اور بین الاقوامی سطح پر برابری اور تنوع کے علمبردار کا کردار ادا کرنے اور سیاسی، سماجی اور ثقافتی اعتبار سے پختہ عزم پر دیا گیا ہے۔ ڈاکٹر شیرا اپنے اس اعزاز کو کمیونٹیز کے درمیان رابطے استوار کرنے کے لئے اپنی کوششوں سے منسوب کرتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ ان کا اولین مقصد ہمیشہ کسی امتیاز کے بغیر کمیونٹی کی خدمت رہا ہے۔ فری مین آف دی بورو آف رگبی کا ایوارڈ ’آنریری فریڈم آف بوروز ایکٹ، 1885 ‘(برطانوی پارلیمنٹ کا ایک قانون) کے تحت دیا گیا ہے۔ یہ قانون انگلینڈ اینڈ ویلز کی میونسپل بوروز کی کونسلوں کو یہ اختیار دیتا ہے کہ وہ ’’منفرد شخصیات اور بورو کے لئے نمایاں خدمات انجام دینے والے کسی فرد‘‘ کو آنریری فری مین کے اعزاز سے نواز سکتی ہیں۔