مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
اوپی سی اوورسیز کیلئے موثر انداز میں کام کررہا ہے5640کنال اراضی واگزار کرلی گئی: افضال بھٹی
برسلز ... اوورسیز پاکستانیز کمیشن (اوپی سی)پنجاب کی کاوشوں سے صوبے بھر میں ابتک اربوں روپے مالیت کی 5640 کنال سے زائد اراضی ناجائزقابضین سے واگزار کرائی جاچکی ہے۔یہ بات وائس چیئر پرسن اوورسیز پاکستانیز کمیشن (اوپی سی)پنجاب شاہین خالد بٹ اور کمشنر افضال بھٹی نے برسلز ،بیلجیم میں اوورسیز پاکستانیوں کی طرف سے دیے جانے والے استقبالئے کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہی ۔استقبالئے میں برسلز اور نواحی شہروں سے تعلق رکھنے والے اوورسیز پاکستانیوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ شاہین خالد بٹ اور افضال بھٹی نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کے ویثرن کے تحت قائم ہونے والا اوپی سی ،سمندرپار مقیم پاکستانیوں کی شکایات کے حل کیلئے موثر انداز میں کام کررہا ہے۔ ایک ہاؤسنگ سکیم میں 140 گھروں اور پلاٹوں کا قبضہ اوورسیز پاکستانیوں کے حوالے کیا جا چکاہے، جنہوں نے دس سال قبل اس سکیم میں گھر اور پلاٹ بک کرائے تھے لیکن انہیں قبضہ نہیں دیا جارہاتھا۔ برسلز کی پاکستانی کمیونٹی کے رہنماناصر چوہان، پرویز لوہسر، مہر ندیم اور دیگر مقررین نے اوپی سی کے قیام پر وزیراعلیٰ پنجاب کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین کرتے ہوئے کہا کہ یہ ادارہ قائم کرکے وزیراعلیٰ پنجاب نے اوورسیز پاکستانیوں کے دل جیت لئے ہیں۔ سمندرپا رمقیم افراد کی مشکلات کے ازالے کیلئے اوپی سی کا کردار خصوصی اہمیت کاحامل ہے ۔ اس موقع پر شاہین خا لد بٹ اورافضال بھٹی نے استقبالئے میں شریک افراد کو اوپی سی کے طریقہ کار اور کارکردگی کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا۔