مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
برطانیہ پلٹ افراد پرتشدد انسانیت کی تذلیل ہے: چوہدری سردار، چوہدری مالک
اولڈہم:بیرون ممالک بسنے والے پاکستانی و کشمیری پاکستان کے زر مبادلہ میں بتدریج اضافہ کرتے ہیں اور مادر وطن سے انکا لازوال رشتہ مضبوط بنیادوں پر استوار ہے لیکن ستم ظریفی کا عالم یہ ہے کہ اسلام آباد ائر پورٹ پر اترنے کے بعد سے لیکر اور پھر واپسی روانگی پر مسافروں کے ساتھ ناوا سلوک،رشوت ستانی و دیگر واقعات معمول کا حصہ ہیں،گزشتہ ایک ہفتہ سے ایف آئی اے کے حکام کی جانب سے برطانیہ پلٹ خاندان کے افراد کو جسمانی تشدد کا نشانہ بنانا اور دوسرے اہلکاروں کا کھڑے ہو کر تماشائی بننا انسانیت کی تذلیل کی بد ترین مثال ہے اس سے بین الاقوامی سطح پر پاکستان کا وقار مجروح ہوا ہے اور بیرون ممالک بسنے والے اور خصوصاً نوجوان نسل کے اندر غم وغصہ اور مایوسی پھیل گئی ہے،یہ باتیں تحریک انصاف برطانیہ کی آرگنائزنگ کمیٹی کے رکن حاجی چوہدری محمد سردار اور چوہدری محمد مالک نے مشترکہ طور پر اس انتہائی افسوسناک واقعات کے بعد میڈیا نمائندگان سے خصوصی بات چیت کے دوران کیا،انہوں نے مزید کہا کہ آج کے جدید دور میں مہذب معاشرے کے اندر ایسے واقعات نہیں ہوتے دنیا کے کسی بہت ہی پسماندہ اور ترقی پذیر ملک میں بھی ایسے وحشیانہ طریقے سے تشدد ائر پورٹ پر کبھی نہیں دیکھے،ہم جو بیرون ممالک بستے ہیں اس کی بھرپور مذمت کرتے ہوئے حکام بالا سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ان واقعہ کی آزادانہ تحقیقات کروا کر اس کے مرتکب کرداروں کو قرار واقعی سزا دی جائے اگر ایسا نہ کیا گیا تو بیرون ممالک بسنے والے بین الاقوامی عدالتوں کا سہارا لیتے ہوئے انصاف کے دروازے کھٹکھٹائیں گے اور دیگر انتہائی اقدامات اٹھانے کا حق رکھتے ہیں۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر