مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
پانامہ کیس فیصلہ:کسی کی فتح یا ہار نہیں ہوئی ،معاملہ مذید پیچیدہ ہو گیا :سیاسی و سماجی راہنما
اولڈہم:پانامہ کیس جو کہ گزشتہ ایک سال سے بھی زائد عرصہ سے پاکستانی سیاست اور عام آدمی کی زد زبان رہا اور پھر سپریم کورٹ میں طویل دلائل بحث و مباحثہ کے بعض بالآخر آج عدالت عظمیٰ نے فیصلہ سناتے ہوئے ایک مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل دیکر ساٹھ دنوں کے اندر مکمل تحقیقات کے ساتھ رپورٹ سپریم کورٹ کو پیش کرے اسکی وجہ یہ ہے کہ پانچ ججز میں دو نے وزیر اعظم کی نا اہلی بارے اختلافی نوٹ لکھا ہے،سیاسی جماعتوں کے کارکنان اس فیصلے کے قانونی پہلوئوں کی گہرائی سے مطالعہ کرنے کی بجائے ہمیشہ کی طرح ایک جذباتی قوم ہونے کا بھرپور ثبوت دیتے ہوئے خوشی کا اظہار اور دیگر جذبات کا اظہار کر رہے ہیں جو لمحہ فکریہ ہے س کیس میں کسی کی فتح یا ہار نہیں ہوئی بلکہ یہ معاملہ مذید پیچیدہ ہو گیا ہے جس سے ملکی مسائل میں کمی کی بجائے مزید اضافہ ہو گا جس سے عام آدمی کی زندگی مزید اجیرن بن جائے گی ان ملے جلے خیالات کا اظہار سپریم کورٹ کے پانامہ بارے فیصلہ آنے کے بعد سیاسی،سماجی و کمیونٹی راہنمائوں سید باسط شاہ مشوانی،منور خان نیازی،چوہدری الطاف شاہد،محمد سلیمان رکھیالوی ایڈووکیٹ،امجد حسین مغل،چوہدری شبیر احمد بہملوی،مولانا قاری عبدالشکور قادری نے میڈیا نمائندگان سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے مزید کہا کہ جب تک پاکستان میں امیر و غریب کیلئے ایک ہی قانون نہیں ہو گا اور عدالتیں قانون کے مطابق بلا تفریق قانون کی بالا دستی کیلئے انتہائی اقدامات نہیں اٹھائیں گی اس وقت ملک کے اندر خوشی و معاشی ترقی نا گزیر ہے اب وقت آ گیا ہے کہ عوام اپنا حق حاصل کرنے کیلئے قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے علم بلند کریں وگرنہ مزید غلامی انکا مقدر بنے گی۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر