مقبول خبریں
پاکستانی کمیونٹی سنٹر اولڈہم میں بیڈمنٹن ٹورنامنٹ کا انعقاد، برطانیہ بھر سے 20 ٹیموں کی شرکت
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ہندوستانی جارحیت کو کھلی چھٹی دیکر عالمی طاقتیں کس ایجنڈے پر کام کر رہی ہیں: فدا حسین کیانی
بریڈ فورڈ ... سابق مشیر وزیر اعظم آزاد کشمیر اور مسلم کانفرنس کے مرکزی رہنما فدا حسین کیانی نے کہا ہے کہ حق خودارادیت کشمیری عوام کا بنیادی مسئلہ ہے جسے پوری دنیا نے اقوام متحدہ کے فورم پر تسلیم کر رکھا ہے ، اور کشمیری عوام کی جدو جہد آزادی اپنے اسی بنیادی حق کے لئے ہے جسے ہندوستان نے اپنی فوجی قوت کے ذریعے غصب کر رکھا ہے ۔ خطے میں پائیدار امن کے قیام کی خاطر عالمی طاقتوں کو اپنا دوہرا معیار ختم کر کے کشمیریوں کو اُن کا حق دلانے کیلئے اپنا کردار کرنا ہو گا ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے یہاں لارڈ مئیر چیمبرز میں لارڈ میئر بریڈ فورڈ کونسلر خادم حسین ، سابق لارڈ میئر کونسلر غضنفر خالق، سابق لارڈ میئر نویدہ اکرام، وزیر اعظم کے مشیر سردار عبد الرحمان، بریڈ فورڈ مسلم خواتین فورم کی چیئرپرسن صبیحہ خان ،رضوانہ جمال ، غزالہ کاظمی،فلک ناز ، عطرت علی اور مریم علی سے ایک اجلاس میں ملاقات کے دوران بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس اجلاس کی صدارت جموں کشمیر تحریک حق خودارادیت یورپ کے چئیرمین راجہ نجابت حسین نے کی۔فدا کیانی نے کہا کہ کشمیر کسی زمین کے ٹکرے کا مسئلہ نہیں بلکہ ایک کروڑ سے زائد عوام کی آزادی اور ان کے مستقبل کا مسئلہ ہے ، دنیا بھر میں آبادپاکستانی اور کشمیری تارکین وطن مسئلہ کشمیر کے سفیر ہیں ، وہ اپنی آواز کو انتہائی موثر انداز میں عالمی ایوانوں تک پہنچا سکتے ہیں۔ انہوں نے راجہ نجابت حسین کی کاوشوں پر انہیں خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ وہ برطانیہ اور یورپ میں کشمیریوں کے حق خودارادیت کے لئے منظم کام کر رہے ہیں۔ فدا کیانی نے کہا کہ ہندوستان کی جارحیت آئے روز بڑھتی جا رہی ہے ، سیز فائر لائن پر گزشتہ چند دنوں سے بھارتی فوجوں کی اشتعال انگیز فائرنگ کے واقعات میں کئی افراد شہید ہو چکے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ہندوستانی جارحیت کو کھلی چھٹی دیکر عالمی طاقتیں کس ایجنڈے پر کام کر رہی ہیں ، امن کے خواہشمند عالمی اداروں کو یہ معلوم ہونا چاہیے کہ کشمیر کے اندر جلنے والی آگ پوری دنیا کے امن کو اپنی لپیٹ میں لے سکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری ایک پرامن قوم ہیں انہیں بھارت کے مظالم اور جبر و استبداد نے ہتھیار اٹھانے پر مجبور کیا تھا۔انہوں نے کہا کہ یوم تاسیس آزاد کشمیر اس بات کا تقاضا کرتا ہے کہ آزاد حکومت کے کردار کو اُن مقاصد سے ہم آہنگ کیا جائے جن کے حصول کیلئے مجاہد اول سردار عبد القیوم خان کی قیادت میں کشمیریوں نے جہاد کیا اور غازی ملت سردار ابراہیم خان کی سربراہی میں اس حکومت کا قیام عمل میں آیا تھا۔ اس موقع پر راجہ نجابت حسین نے 23اکتوبر سے برطانیہ اور یورپ میں مسئلہ کشمیر کے سلسلہ میں ’’ہفتہ بیداری ‘‘ شروع کیا جا رہا ہے جس کے پروگراموں کی تفصیلات سے انہوں نے اجلاس کے شرکاء کو آگاہ کیا اور کہا کہ اس ہفتہ بھر کے دوران ممبران پارلیمنٹ ، عالمی ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے رابطے ، مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق سے آگاہی اور آزاد کشمیر حکومت کے یوم تاسیس کے حوالے سے پروگرام ترتب دیے گئے ہیں ۔ راجہ نجابت حسین نے کہا کہ ہماری جدو جہد کا بنیادی مقصد دنیا کو مسئلہ کشمیر کی اہمیت سے آگاہ کرنا ہے اوریہ واضح کرنا ہے کہ کشمیریوں کی جدو جہد اپنے اُس بنیادی اور پیدائشی حق کیلئے حصول کیلئے ہے جسے اقوام متحدہ کے فورم پر ہندوستان سمیت تمام عالمی طاقتوں نے تسلیم کر رکھا ہے۔ اس موقع پر لارڈ میئر بریڈ فورڈ کونسلر خادم حسین ، سابق لارڈ میئر کونسلر غضنفر خالق، سابق لارڈ میئر نویدہ اکرام، وزیر اعظم کے مشیر سردار عبد الرحمان اور بریڈ فورڈ مسلم خواتین فورم کی چیئرپرسن صبیحہ خان نے بھی اظہار کیال کرتے ہوئے کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی حمائت کی۔