مقبول خبریں
بین الاقوامی میڈیا نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کی کلی کھول دی ہے:سردار مسعود خان
ڈیبی ابراھم کی قیادت میں ممبران پارلیمنٹ اور کمیونٹی رہنماؤں کی لارڈ طارق احمد سے ملاقات
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کی وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر اور شاہ غلام قادر سے ملاقات
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
9ستمبر کو اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے باہر بھرپور مظاہرہ کرینگے:راجہ نجابت حسین
سوچنے کے موسم میں سوچنا ضروری ہے!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
میدان سیاست میں اتارنے سے پہلے پیپلز پارٹی اپنے چیئرمین کی اخلاقی تربیت کرے:علی عباس بخاری
سلاؤ ...منہاج القرآن انٹرنیشنل برطانیہ کے سیکرٹری جنرل سید علی عباس بخاری نے پی پی پی کے چیئرمین بلاول بھٹو کی تقریر کو ایک بچے کی توجہ حاصل کرنے کی ناکام کوشش قراردیتے ہوئے کہا ہےکہ پیپلزپارٹی بلاول کی سیاسی تربیت کاآغاز اخلاقیات سے کرے۔ انھوں نے کہا کہ اسلام آباد میں ڈاکٹر طاہر القادری اور ان کے لاکھوں مداحوں کی قومی سیاسی خدمت اور قربانی کی آج پی پی پی سمیت ہر پاکستانی سیاسی جماعت نہ صرف تائید کر رہی ہے بلکہ برملا طور پر اس بات کا بھی اعتراف کر رہی ہے کہ ڈاکٹر طاہر القادری نے جو کہا تھا وہ سچ تھا۔ علی عباس بخاری نے کہا کہ آکسفورڈ کی گلیوں میں تعلیم حاصل کرنے والے کے منشی نے اس کو کاغذ پر لکھا سبق تو پڑھا دیا لیکن شاید یہ بتانا بھول گیا کہ وہ جس شخصیت کے بارے میں بولنے لگے ہیں اسی ڈاکٹر طاہر القادری کی زیر سرپرستی چلنے والی منہاج القرآن کی لائف ممبر شپ بینظیر بھٹو نے بھی حاصل کررکھی تھی۔ دریں اثنا منہاج القرآن برنلے کے ڈائریکٹر علامہ شمس الرحمن آسی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ پاکستان کا سرمایہ دارانہ اور جاگیردارانہ استحصالی ریاستی نظام ہی تمام سیاسی ،معاشی اور سماجی مسائل کا سبب ہے۔ اس سیاسی و انتخابی نظام کی بنیاد ہی ظلم، ناانصافی اور کرپشن پر قائم ہے جس میں رہتے ہوئے وسائل کی منصفانہ تقسیم ممکن ہی نہیں ہے۔ یہ نظام ناکارہ، ناکام اور فرسودہ ہوچکاہے۔ پاک سرزمین میں سرمایہ دار، جاگیردار، سیاستدان اور بیوروکریٹس اپنے ہی شہریوں کو لو ٹنے میں مصروف ہیں۔ایک عرصہ سے یہ لٹیرے مختلف حربوں کے ساتھ حکومت میں شامل ہوکر یا حکمرانوں سے ملی بھگت کرکے قومی دولت لوٹ رہے ہیں جبکہ عوام خاموش تماشائی ہیں۔عوام اگر قوم بن جائے تو ملک کے فرسودہ اور کرپٹ نظام کو جڑ سے اُکھاڑ پھینک سکتے ہیں۔