مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر میں انتخابی بائیکاٹ کی مہم، مظاہرے ،جھڑپیں ،21گرفتار
سرینگر :مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز نے ضلع پلوامہ میں رات کے دوران چھاپوں میں ایک 70سالہ بزرگ سمیت 21 افراد کو گرفتار کرلیا ہے ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی پولیس نے بھارت کے آئندہ نام نہاد پارلیمانی انتخابات سے قبل سرینگر ، اسلام آباد ، پلوامہ ، کولگام اور بانڈی پورہ کے اضلاع میں گھروں پر چھاپوں کے کے دوران لڑکوں اور معمر افراد سمیت تین درجن سے زائد کشمیریوں کو گرفتار کیا ۔ حریت قیادت نے اپنے بیانات میں گرفتاریوں کی شدید مذمت کی ہے ۔ دوسری جانب حریت رہنمائوں الطاف احمد شاہ ، غلام نبی ذکی ، شیخ عبدالرشید اور عمر عادل ڈار نے سرینگر میں نام نہاد پارلیمانی انتخابات کے بائیکاٹ کی مہم شروع کر دی ہے ، پمفلٹ تقسیم اور پوسٹر چسپاں کر کے بھارتی ہتھکنڈوں کے خلاف آگاہی پھیلائی جارہی ہے ۔ قابض انتظامیہ نے انتخابی ڈھونگ کیلئے تمام آزادی پسند قیادت کواپنے گھروں یا جیلوں میں نظربند کر رکھا ہے ۔ادھرضلع کپواڑہ میں کم سن بچی اور بے گناہ نوجوانوں کی شہادت کے چھٹے روز بھی مقبوضہ وادی میں حالات کشیدہ رہے ۔اس دوران سرینگر کے پائین شہر کے علاوہ گائو کدل،صورہ آنچار، ماچھوا، کپوارہ،سوپور،اوردیگر جگہوں پر جلوس اوراحتجاج ہوا جبکہ قابض فوج و پولیس کی جانب سے تشدد کے استعمال اور جھڑپوں میں 7افراد زخمی ہوئے ۔مظاہرین نے اس دوران پاکستان اور اسلام کے حق جبکہ بھارت کی مخالفت میں نعرے بازی کی ۔