مقبول خبریں
یورپین مسلم کونسل کے صدر میاں عبد الحق اور یو کے اسلامک مشن محمد صادق کھوکھر کا ناروے پہنچنے پر والہانہ استقبال
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کشمیری نژاد برطانوی شہری بیرسٹر فیاض افضل نےبحیثیت ڈسٹرکٹ جج عہدے کا حلف اٹھا لیا
ڈربی:قدرت نے انسان کے اندر وہ تمام خوبیاں پیدا کی ہوئی ہیں جن کا بعض اوقات ہم اندازہ نہیں کر سکتے اور جو انسان بھی اس دنیا میں آیا ہے اسےمقصد کیلئے بھیجا گیا ہے ایسی ہی ایک مثال آج ڈربی میں آنکھوں سے معزور ایک نابینا کشمیری نژاد برطانوی شہری بیرسٹر فیاض افضلOBEکی ہے جنہوں نے ڈربی کمبائنڈ کورٹ سنٹر میں بحیثیت ڈسٹرکٹ جج کے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا ہے،اس موقع پر انہوں نے کہا کہ میرا تعلق ایک ایسے گھرانے سے ہے جن کا کوئی فرد بھی قانون کے پیشے سے وابستہ نہیں ہے میں واحد شخص تھا جس نے یونیورسٹی میں جا کر تعلیم حاصل کی اور اپنے نابینے پن کو کبھی اپنے اعصاب کے اوپر حاوی نہیں ہونے دیا،انہوں نے کہا کہ والدین کی دعائیں اور انکی مدد تعاون ہروقت میرے ساتھ رہا یہی وجہ ہے کہ ترقی کی منزلیں طے کرنے میں کبھی رکاوٹ کا سامنا نہیں کرنا پڑا اگر انسان سخت محنت کو اپنا شعار بنا لے تو جس کام کی بھی ٹھان بے کامیابی قدم چومتی ہے،انہوں نے کہا کہ جب انہیں اس بات پر فخر ہے کہ برطانیہ بھر میں عالباً وہ پہلےفرد ہیں جو نابینا ہونے کے باوجود جج کے عہدے پر فائزہوئے ہیں اس سے کمیونٹی کے اندر خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے،انہوں نے کہا کہ انہیں2008میں ملکہ برطانیہ کی طرف سےOBEکے ایوارڈ سے نواز گیا،2010میں ڈپٹی جج کی حیثیت سے ذمہ داریاں نبھائیں اور2015سے ریکاڈر کی حیثیت سے کام کیا،سماجی و کمیونٹی کی سرگرمیاں میں انکا کردار نمایاں ہے انکے خاندان دوست احباب نے کہا کہ وہ معزور افراد کیلئے ایک رول ماڈل کی حیثیت رکھتے ہیں،انکے ساتھیوں نے انکے عہدہ سنبھالنے کو انتہائی خوش آئند قرار دیا اور کہا کہ وہ ہر لحاظ سے اس کے مستحق تھے،اس سے کمیونٹی کو آپس میں ملانے اور باہمی تعلقات کوفروغ ملے گا،یاد رہے کہ موصوف کا تعلق آزاد کشمیر کے علاقہ راجدھانی سے ہے اور کمیونٹی کے اندر انکا خاندان ایک نمایاں مقام و حیثیت رکھتا ہے۔خصوصی رپورٹ:فیاض بشیر